ویرات کوہلی صفر پر واپس پویلین لوٹ گئے لیکن کیا وہ آوٹ تھے یا نہیں ؟ کرکٹ کی تاریخ میں انوکھا واقعہ پیش آگیا

ویرات کوہلی صفر پر واپس پویلین لوٹ گئے لیکن کیا وہ آوٹ تھے یا نہیں ؟ کرکٹ کی ...
ویرات کوہلی صفر پر واپس پویلین لوٹ گئے لیکن کیا وہ آوٹ تھے یا نہیں ؟ کرکٹ کی تاریخ میں انوکھا واقعہ پیش آگیا

  

ممبئی(ڈیلی پاکستان آن لائن )بھارت اور نیوزی لینڈ کے درمیان دوسرے ٹیسٹ میچ کے پہلے دن کے اختتام پر بھارت نے چار وکٹوں کے نقصان پر 221رنز بنا لیے ۔بھارتی کپتان ویرات کوہلی بغیر کوئی رن بنائے ایل بی ڈبلیو آوٹ ہو گئے لیکن وہ تھرڈ ایمپائر کے اس فیصلے پر حیرانی کا شکار ہو گئے ۔

ممبئی میں ہونے والے دوسرے ٹیسٹ میچ میں بھارت نے ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کا فیصلہ کیا ۔بھارتی اوپنرز مینک اگروال 120سکور بنا کر پچ پر موجود ہیں جبکہ ان کے ساتھ آئے شبمن گل 44سکور بنا کر آوٹ ہوئے ۔ ان کے بعد آنے والے چتیشور پجارا بغیر کوئی رن بنائے آوٹ ہوئے ۔پھرکپتان ویرات کوہلی پچ پر آئے لیکن اعجاز پٹیل کی گیند پر ایل بی ڈبلیوآوٹ ہوئے ۔ جب ویرات کوہلی کے پیڈ پر گیند لگا تو باولر نے ایمپائر سے اپیل کی جس پر فیلڈ ایمپائر نے آوٹ دے دیا لیکن ویرات کوہلی نے پورے اعتماد کے ساتھ ریویو لے لیا جس پر فیصلہ تھرڈ ایمپائر کے پاس چلا گیا ۔ جب اس گیندکو دوبارہ دیکھا تو یہ ایک ہی وقت پر بلے اور پیڈ کے ساتھ ٹکرا رہی تھی ۔یہ ہی وجہ تھی کہ ویرات کوہلی پر اعتماد تھے کہ وہ آوٹ نہیں ہوئے لیکن تھرڈ ایمپائر نے فیلڈ ایمپائر کو ہدایت دی کہ وہ اپنا فیصلہ برقرار رکھیں ۔ یہ دیکھ کر ویرات کوہلی ایک دم ہکا بکا رہ گئے اور انہوں نے اس بارے میں فیلڈ ایمپائر سے کوئی بات بھی کی اور پھر پویلین لوٹ گئے ۔ان کے بعد آنے والے کھلاڑی شریاس ایر 18سکور بنا کر آوٹ ہوئے ۔نیوزی لینڈ کی جانب سے چاروں وکٹیں اعجاز پٹیل نے حاصل کیں ۔

مزید :

کھیل -