سپریم کورٹ ، کبوتر بازی کے تنازع پر قتل کرنیوالے ملزم کی ضمانت خارج

سپریم کورٹ ، کبوتر بازی کے تنازع پر قتل کرنیوالے ملزم کی ضمانت خارج

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 لاہور(نامہ نگار خصوصی )سپریم کورٹ نے کبوتر بازی کے تنازع پر شہری کو قتل کرنے والے ملزم کی درخواست ضمانت خارج کر دی ۔سپریم کورٹ رجسٹری میں چیف جسٹس پاکستان مسٹر جسٹس ناصر الملک اور مسٹر جسٹس اعجاز احمد چودھری پر مشتمل دو رکنی بنچ نے ملزم خلیل احمد کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ اوکاڑہ پولیس نے ملزم کیخلاف کبوتر بازی پر معمولی تنازع کی بنیاد پر اوکاڑہ کے رہائشی مخدوم علی کو قتل کر نے کا مقدمہ درج کیا ہے، انہوں نے بتایا کہ مخالفین نے پرانے عناد کی بنیاد پر ملزم کو اس مقدمے میں نامزد کیا جبکہ ملزم کا کبوتر بازی اور اس پر جھگڑے سے کوئی تعلق نہیں ہے لہذا ملزم کی ضمانت منظور کی جائے، پولیس رپورٹ میں عدالت کو بتایا گیا کہ ملزم پر شہری کو قتل کرنے کا الزام ثابت ہے جبکہ ملزم کے قبضے سے آلہ قتل پستول بھی برآمد کر لیا گیا ہے اورچالان بھی ٹرائل کورٹ میں جمع ہو چکا ہے، سپریم کورٹ نے ریکارڈ دیکھنے کے بعد ملزم کی درخواست ضمانت واپس لینے کی بنیاد پر خارج کر دی۔

مزید :

صفحہ آخر -