حکومت مسئلہ کشمیر حل کرانے کیلئے ٹھوس حکمت عملی تیار کرے ‘ مذہبی ‘ سیاسی رہنما

حکومت مسئلہ کشمیر حل کرانے کیلئے ٹھوس حکمت عملی تیار کرے ‘ مذہبی ‘ سیاسی ...

ملتان (سٹی رپورٹر)تحریک آزادی جموں کشمیر کے زیر اہتمام کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لیے منعقدہ آل پارٹیزکانفرنس میں مختلف مذہبی و سیاسی جماعتوں کے رہنماؤں نے کہا ہے کہ کشمیری اپنی جانیں قربان کر کے تکمیل پاکستان کی جنگ لڑ رہے ہیں۔کشمیر پاکستان کے لیے زندگی اور موت کا مسئلہ ہے۔کشمیریوں نے2018ء میں پاکستان کا جھنڈا گرنے نہیں دیا، 2019ء میں پاکستانی قوم کشمیریوں کے لیے (بقیہ نمبر14صفحہ12پر )

سڑکوں پر ہوگی۔کشمیریوں پر ہونے والے مظالم پر اقوام عالم کی خاموشی افسوسناک اور مجرمانہ ہے ۔ حکمران محض نعرے نہیں بلکہ مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے ٹھوس اقدامات کریں۔کشمیرکے بہادر نوجوانوں اور پروفیسر حافظ محمد سعید کو خراج عقیدت پیش کرتے ہیں۔05فروری کو 9نمبر چونگی سے چوک گھنٹہ گھر تک بڑا یکجہتی کارواں نکالا جائے گا۔ان خیالات کا اظہار مرکزی رہنما تحریک آزادی جموں کشمیر علی عمران شاہین ،پروفیسرعبدالمجیدناظم اعلی جماعت اہلحدیث پاکستان ،مولانا ایوب مغل صدر جمیعت علمائے پاکستان ملتان، ابو معاذ عمران امیر تحریک آزادی جموں کشمیرجنوبی پنجاب،مولانا عبدالرحمان شاہین مدیر جمامعہ اسلامیہ ملتان ،ظفر اقبال صدیقی صدر چمیبر آف کامرس سمال ٹریڈرز ،رانا نصر اللہ خان چئیرمین خدمت خلق فاؤنڈیشن ضلع ملتان،خالد جاوید کھیڑ ا صدر تاجران گلگست ملتان،اطہر عزیز نائب امیر جماعت اسلامی ضلع ملتان،حافظ محمد معظم ہیڈ سائبر ٹیم تحریک آزادی جموں کشمیر جنوبی پنجاب،اللہ دتہ ساجد سیکرٹری جنرل میپکو پیغام یونین ،میاں سہیل احمد امیر تحریک آزادی جموں کشمیر ضلع ملتان،ذوالفقار انصاری رہنما انصاری موومنٹ ملتان،محمد زاہدقریشی،محمد ثاقب سمیت دیگر سیاسی ، دینی و سماجی جماعتوں کے رہنماؤں نے تحریک آزادی جموں کشمیرملتان کے زیر اہتمام نجی ہال میں منعقدہ کل جماعتی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ مرکزی رہنما تحریک آزادی جموں کشمیر علی عمران شاہین کا کہنا تھا کہ کشمیری اپنے بیٹوں اور املاک کی قربانیاں دے کر پاکستان کی بقا کے لیے تحریک چلا رہے ہیں۔ ان کی جدوجہد سے پاکستان کی سلامتی اور انڈیا کے وجود کے لیے خطرات پیدا ہوگئے ہیں۔ ہر پاکستانی کشمیریوں کے کردار کو قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے۔ہم آج یہ اعلان کر رہے ہیں کہ کشمیریوں نے 2018ء میں پاکستان کا جھنڈا گرنے نہیں دیا، 2019ء میں پاکستانی قوم کشمیریوں کے لیے سڑکوں پر ہوگی۔پروفیسرعبدالمجیدناظم اعلی جماعت اہلحدیث پاکستان کا کہنا تھاکہ پاکستان کو بھی کشمیریوں کی اس تحریک میں کشمیریو ں کے شانہ بشانہ کردار ادا کرنا چاہیے۔ بھارت ہمارا دوست کسی صورت نہیں ہوسکتا۔ حکمران مصلحت ترک کرتے ہوئے کشمیریوں کے ساتھ کھڑے ہو۔کشمیریوں اور پاکستانیوں کا خون پسینہ ایک ساتھ گرے گا۔مولانا ایوب مغل صدر جمیعت علمائے پاکستان ملتان کا کہنا تھاکہ مسئلہ کشمیر کے لیے آواز اٹھانے کے باوجود مسئلہ جوں کا توں برقرار ہے۔ آزاد کشمیر جہاد کے ذریعے حاصل کیا گیا تھا۔ آج بھی وہی کردار ادا کرنے کی ضرورت ہے۔ ابو معاذ عمران امیر تحریک آزادی جموں کشمیرجنوبی پنجاب کا کہنا تھاکہ کشمیریوں کے بنیادی حق پر انڈیا جبراََ قابض ہے۔ اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عمل کب ہوگا؟ مظلوم کشمیری پاکستان کا حصہ بننے کے لیے آزادی کی جنگ لڑ رہے ہیں اور بڑی طاقتیں ان کی آواز دبانی چاہتی ہیں۔کشمیر کا مسئلہ صرف کشمیریوں کا نہیں بلکہ پاکستان کی بقا کا بھی مسئلہ ہے۔ مولانا عبدالرحمان شاہین مدیر جمامعہ اسلامیہ ملتان کا کہنا تھاکہ کشمیر پر آل پارٹیز کانفرنس کا انعقاد وقت کی اہم ضرورت ہے۔ کشمیر کی مائیں اور بہنیں ستر سال سے بے آبرو ہو رہی ہیں، لیکن ہم خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں۔ مصلحتوں کا شکار ہوکر کشمیر میں مظالم سے نظریں چرائیں جا رہی ہیں۔ اگر کشمیر ہماری شہ رگ ہے تو ہمیں ایک ہوکر کشمیر کی کامل آزادی تک جدوجہد کرنی ہوگی۔اطہر عزیز نائب امیر جماعت اسلامی ضلع ملتان کا کہنا تھا کہ اقوام متحدہ کی قراردادیں جھوٹ کا پلندہ ہے۔ کشمیر بزور شمشیر ہی آزاد ہوگا۔ کشمیر کے مسئلے پر ہم جماعۃ الدعوۃ اور کشمیریوں کے ساتھ کھڑے ہیں۔ قائد اعظم نے قرار دیا تھا کہ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے۔ بھارت کشمیر میں متنازع ڈیموں کے ذریعے پاکستان کو سیلاب اور خشک سالی سے متاثر کر رہا ہے۔دیگر رہنماؤں کا کہنا تھا کہ کشمیریوں نے پاکستان کو اپنا وکیل بنایا ہے۔ سیاسی و سفارتی سطح پر پاکستان کا جو کردار ہونا چاہیے تھا وہ نظر نہیں آتا۔ میڈیا بھی کشمیریوں کی تحریک کو نظر انداز کر رہا ہے۔ ہم آج کی اے پی سی کی وساطت سے حکومت پاکستان سے مطالبے کرتے ہیں کہ کشمیر کاز کو نقصان پہنچانے کی بجائے اس کے لیے کردار ادا کرے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...