خوگہ خیل قوم کے مشران کو نظر انداز کرکے ناانصافی کی گئی ،ذکریا شنواری

خوگہ خیل قوم کے مشران کو نظر انداز کرکے ناانصافی کی گئی ،ذکریا شنواری

خیبر (بیورو رپورٹ)شینواری خوگہ خیل قوم کے سرکردہ کمیٹی ممبران زکریا شینواری، عبدالرازق شینواری و دیگر نے اسسٹنٹ کمیشنر لنڈی کوتل محمد عمران کے خلاف پریس کلب میں پرہجوم پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اے سی لنڈی کوتل محمد عمران نے خوگہ خیل قوم کے نمائندہ ممبران کو نظرانداز کرکے چور دروازے طورخم قومی آراضی کے سلسلے میں مذاکرات کئے ہیں جس کو مسترد کرتے ہیں، انہوں نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ طورخم مسئلہ افہام و تفہم سے حل کریں لیکن اسسٹنٹ کمیشنر لنڈی کوتل محمد عمران خوگہ خیل کو تقسم کرنے پر تلے ہوئے ہیں، جس کی وجہ اگر حالات خراب ہو گئے تو اس کے ذمہ دار اسسٹنٹ کمیشنر لنڈی کوتل ہونگے، انہوں نے کہا کہ طورخم میں مسائل ختم کرنا چاہتے ہیں اور اس مقصد کے لئے ڈی سی خیبر محمود اسلم وزیر کے ساتھ سینیٹر تاج محمد آفریدی کی قیادت میں بات چیت ہوئی تھی جہاں چار نکات رکھے گئے تھے جس میں یہ طے کیا گیا کہ 4جون 2015 کا معاہدہ برقرار رکھا جائے,طورخم زمین لیز کے سالانہ دو کروڑ میں 10فیصد اضافہ کیا جائے, فیز ون کو خالی کیا جائے اور معاہدے والی جگہ کی ڈیمارکیشن کی جائے, زکریا شنواری اور عبدالرزاق شنواری نے کہا کہ این ایل سی اور پولیٹکل انتظامیہ 4جون 2015 والا معاہدہ ختم کرنے پر تلے ہوئے ہیں جس کے لئے قوم خوگہ خیل کسی صورت تیار نہیں انہوں نے کہا کہ خوگہ خیل قوم کے بعض مشران اور نوجوانان خوگہ خیل نے بالائی سطح پر حکام کے ساتھ مذاکرات کئے ہیں دراصل وہ قوم خوگہ خیل کے نمائندے نہیں اور پولیٹکل انتظامیہ کے اے سی محمد عمران کے کہنے پر سرکاری پروٹوکول میں گئے تھے جس کے لئے رات کی تاریکی میں انتظامیہ کے آفسران نے منصوبہ بندی کر لی تھی زکریا شنواری نے کہا کہ اسسٹنٹ کمیشنر لنڈی کوتل کے غلط پالیسی کے باعث قوم کے اندر انتشار پیدا ہو سکتا ہے انہوں نے کہا کہ ساری خوگہ خیل قوم کو اعتماد میں لیا جائے بصورت دیگر وہ احتجاج کی راہ پر چل نکلیں گے انہوں نے کہا کہ سینیٹر تاج محمد آفریدی کی قیادت میں ڈی سی خیبر محمود اسلم وزیر کے ساتھ کامیاب مذاکرات کئے گئے تھے لیکن اچانک انتظامیہ نے دیگر چند افراد سے ملکر سارا ماحول خراب کر دیا انہوں نے کہا کہ طورخم بارڈر سے تمام علاقوں اور خیبر پختون خوا کے لوگوں کا روزگاراور کاروبار وابستہ ہے اس لئے کوئی ایسا اقدام نہ کیا جائے جس سے لوگوں کے مفادات اور کاروبار کو نقصان پہنچ سکیں، انہوں نے کہا کہ طورخم قومی اراضی کے سلسلے میں اسسٹنٹ کمیشنر لنڈی کوتل قوم کی اتفاق و اتحاد خراب کرنے پر تلے ہوئے ہیں م انہوں نے جلداز جلد تبدیل کیا جائے،انہوں نے کہا کہ خوگہ خیل قوم کے متفقہ کمیٹی کو اعتماد میں لئے بغیرکسی قسم کا فیصلہ خوگہ خیل قوم کو قبول نہیں ہوگا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...