وہ وقت جب شیخ محمد بن راشد نے دبئی کا ولی عہد بننے سے انکار کردیا

وہ وقت جب شیخ محمد بن راشد نے دبئی کا ولی عہد بننے سے انکار کردیا
وہ وقت جب شیخ محمد بن راشد نے دبئی کا ولی عہد بننے سے انکار کردیا

  


دبئی(مانیٹرنگ ڈیسک) دبئی کے حکمران اور متحدہ عرب امارات کے نائب صدر اور وزیراعظم شیخ محمد بن راشد المختوم نے ابتداءمیں دبئی کا ولی عہد بننے سے انکار کر دیا تھا۔ اب انہوں نے اپنی کتاب ’قساطی‘ (Qissati)میں اپنے اس اقدام کی وجہ بیان کر دی ہے۔

خلیج ٹائمز کے مطابق کتاب کے 18ویں باب میں شیخ محمد بن راشد لکھتے ہیں کہ ”میرے بھائی، اس وقت کے دبئی کے حکمران، نے مجھے اپنا ولی عہد بننے کو کہا لیکن میں نے انکار کر دیا۔ اس کے چار سال بعد انہوں نے دوبارہ مجھے یہ پیشکش جو اس بار میں نے قبول کر لی۔ ایک صبح مجھے ایسے محسوس ہوا جیسے کوئی نرمی کے ساتھ میرا کندھا تھپتھپا رہا ہے۔ میں بیدار ہوا تو وہ میرے بھائی مختوم تھے۔ انہوں نے بتایا کہ ان کی گھوڑی بچہ دینے والی ہے۔ “

شیخ محمد بن راشد مزید لکھتے ہیں کہ ”جب پہلی بار میں نے اپنے بھائی کی ولی عہد بننے کی پیشکش باعزت طریقے سے مسترد کی تو انہوں نے وجہ پوچھی۔ میں نے انہیں کہا کہ میرے طرزِ حکمرانی سے بہت سے لوگوں کو کوفت ہو گی اور ان کے ساتھ میرے ذاتی مراسم ختم ہو جائیں گے۔ چار سال بعد انہوں نے دوبارہ کہا کہ اب وقت آ گیا ہے، تمہیں ولی عہد بن جانا چاہیے۔ اس بار میں رضامند ہو گیا۔ لوگ مجھ سے پوچھتے ہیں کہ جب میرے ولی عہد بننے کا فرمان جاری ہوا تو میں نے کیسا محسوس کیا۔ درحقیقت اس رات میں سو نہیں پایا تھا۔ اس کے بعد میری زندگی اتنی مصروف ہو گئی کہ اخبار پڑھنے کا وقت بھی نہیں ملتا تھا۔“

مزید : عرب دنیا


loading...