”نواز شریف کے ہارڈ لائن نہ لینے سے یہ تصور عام ہوا“:تجزیہ کار عارف نظامی کا این آر او کے حوالے سے اہم تجزیہ

”نواز شریف کے ہارڈ لائن نہ لینے سے یہ تصور عام ہوا“:تجزیہ کار عارف نظامی کا ...
”نواز شریف کے ہارڈ لائن نہ لینے سے یہ تصور عام ہوا“:تجزیہ کار عارف نظامی کا این آر او کے حوالے سے اہم تجزیہ

  


لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) تجزیہ کار عارف نظامی نے کہاہے کہ الیکشن کے بعد ن لیگ کے ہار ڈ لائن نہ لینے سے یہ لینے سے یہ تصور عام ہوا کہ کوئی این آر او کی بات چل رہی ہے ۔

دنیا نیوز کے پروگرام ”اختلافی نوٹ “ میں گفتگوکرتے ہوئے عارف نظامی نے کہاہے کہ مجھے نہیں لگتاکہ کوئی این آر او ہوسکتاہے ، یہ اصطلاح شیخ رشید اور فواد چودھری استعمال کرتے ہیں ، نوازشریف کی جانب سے یہ بات کی جارہی ہے کہ میری صحت بڑی خراب ہے جس پر ان کوہسپتال میںمنتقل کردیا گیا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ الیکشن کے بعد سے نوازشریف اور ان کی صاحبزادی کا رویہ بدل گیاہے ، جب نواز شریف جیل میں نہیں تھے تو ان کی جانب سے آصف زرداری سے ملاقات نہ کی گئی ، اس طرح کوئی ہارڈ لائن نہ لینے سے یہ تصور عام ہوا کہ جیسے کوئی این آر لینے کی بات چل رہی ہے ۔

مزید : قومی


loading...