قومی محاصل سے قبائلی اضلاع کو ادائیگی اور یوتھ لون کی فراہمی التواء کا شکار

قومی محاصل سے قبائلی اضلاع کو ادائیگی اور یوتھ لون کی فراہمی التواء کا شکار

  



پشاور(آن لائن) قبائلی اضلاع کو این او سی ایوارڈ کا حصہ نہ ملنے پر وزیر اعظم یوتھ پروگرام کے تحت نوجوانوں کو10سے 50لاکھ روپے کے قرضوں کی فراہمی اورعالمی اداروں کی اہم اصلاحات التوا کاشکار ہو گئے ہیں۔ قبائلی اضلاع کو صوبوں میں ضم ہونے کے بعد نویں قومی مالیاتی کمیشن ایوارڈ (این ایف سی ایوارڈ) کے لئے کوئی نمایاں پیش رفت نہ ہونے کے باعث قابل تقسیم محاصل سے قبائلی اضلاع کو حصہ کی فراہمی نہ ہو سکی سابق دور میں قبائلی علاقوں کو این ایف سی ایوارڈ کے تحت قابل تقسیم محاصل سے 4.9فیصد حصہ دینے پر وفاق او رصوبوں کے درمیان مذاکرات شروع ہو ئے تھے تاہم چاروں صوبوں نے اس پر اتفاق را ئے نہیں کیا اور وفاق سے اپنا حصہ اس میں شامل کرنے کی ہدایات کا مطالبہ کیاتھا دو صوبوں نے اس کی شدید ترین مخالفت کی تھی جس کے بعد یہ معاملہ التواء کا شکار ہو گیا ہے۔

قومی محاصل

مزید : صفحہ آخر