جاپان کے 60 فیصد بینکوں میں سائبر حملوں کے مقابلے کیلئے تیاری ناکافی

  جاپان کے 60 فیصد بینکوں میں سائبر حملوں کے مقابلے کیلئے تیاری ناکافی

  



ٹوکیو (اے پی پی) جاپان کے مرکزی بینک کے ایک جائزے سے معلوم ہوا ہے کہ ملک کے تقریباً 60 فیصد مالیاتی اداروں میں سائبر حملوں سے نمٹنے کے لیے مناسب عملہ نہیں ہے۔بینک آف جاپان نے گزشتہ سال 402 مالیاتی اداروں سے دریافت کیا تھا کہ آیا انہیں کبھی سائبر حملوں کا سامنا ہوا ہے، اور یہ کہ انہوں نے کیا اقدامات اٹھائے ہیں۔39 فیصد نے بتایا کہ انہیں 2017 سے 2019 کے درمیان سائبر حملوں کا سامنا رہا ہے۔ 10 فیصد نے بتایا کہ حملوں سے ان کا کام اور انتظامی امور متاثر ہوئے۔ 59 فیصد تک اداروں نے بتایا کہ ان کے پاس سائبر حملوں کے مقابلے کا نظام تیار کرنے کے لیے عملے کی مناسب تعداد موجود نہیں۔صرف 44 فیصد نے بتایا کہ انہوں نے سائبر حملے سے تباہ یا تبدیل کر دیے جانے والے نظام کی بحالی کے طریقے کی مشق کی ہے۔ حالانکہ 90 فیصد اداروں میں بحالی کا منصوبہ موجود ہے۔2020 ٹوکیو اولمپکس و پیرالمپکس سے قبل اہم بنیادی ڈھانچے پر حملوں کے خدشات پائے جاتے ہیں۔ بینک آف جاپان، مالیاتی اداروں پر حفاظتی اقدامات کے لیے زور دے رہا ہے۔

مزید : علاقائی