ٹانک،محسود قبائل کا احتجاجی دھرنا ساتویں روز میں داخل

  ٹانک،محسود قبائل کا احتجاجی دھرنا ساتویں روز میں داخل

  



ٹانک(نمائندہ خصوصی)جنوبی وزیرستان یو محسود احتجاجی دھرنا ساتویں روز بھی جاری رہا ضلعی انتظامیہ جنوبی وزیرستان کی مذاکراتی عمل شروع نہ کرنے کی ہٹ دھرمی برقرار سوموارکے روز احتجاجی کیمپ سے کشمیر چوک تک پر امن ریلی نکالنے کا اعلان مطالبات تسلیم نہ ہونے کی صورت میں احتجاجی دھرنے کا اگلا پڑاؤ ڈپٹی کمشنر کمپاؤنڈ جنوبی وزیرستان میں ہو گاتفصیلات کے مطابق آپریشن کے دوران محسود قبائل کے گھروں کو پہنچنے والے نقصانات کے ازالہ اور معاوضوں کی عدم ادائیگیوں میں بے قاعدگیوں کے خلاف جاری دھرنا ساتویں روز بھی جاری ہے جبکہ ضلعی انتظامیہ جنوبی وزیرستان نے ابھی تک دھرنا شرکاء سے مذاکراتی عمل شروع نہیں کیا ہے دھرنے سے شیرپاؤ ایڈوکیٹ سمیت دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ضلعی انتظامیہ کا مذاکراتی عمل شروع نہ کرنے سے صاف طاہر ہو رہا ہے کہ وہ محسود قبائل کی مشکلات کو حل کرنے کا کوئی ارادہ نہیں رکھتی ہے جبکہ انتظامیہ دوسری طرف اپنے کردار سے اپنی سیاہ کاریوں کو چھپانے کی سر توڑ کوشش میں مصروف عمل ہے انتظامیہ پر امن احتجاجی دھرنے کے شرکاء کو اشتعال پر مجبور کرنا چاہتی ہے ان کا کہنا تھا کہ سوموار کے روز احتجاجی کیمپ سے ہزاروں افراد پر مشتمل ایک پر امن احتجاجی ریلی نکالی جائیگی جو کشمیر چوک پر اپنے حقوق کے حصول کے لئے احتجاج ریکارڈ کرائیگی انہوں نے کہا کہ ہم عدم تشدد کی پالیسی پر عمل پیرا ہیں اگر ہمارے مطالبات حل نہ کئے گئے تو پھر پر امن احتجاجی دھرنے کا اگلا پڑاؤ ضلعی انتظامیہ کمپاؤنڈ جنوبی وزیرستان میں ہو گا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر