شہدا کشمیر کے ایصال ثواب کیلئے قرآن خوانی‘دعائیں،مودی ہٹلر کی باقیات‘ زاہد حبیب قادری‘ اکرام اللہ

  شہدا کشمیر کے ایصال ثواب کیلئے قرآن خوانی‘دعائیں،مودی ہٹلر کی باقیات‘ ...

  



ملتان (سٹی رپورٹر)سنی تحریک کے زیر اہتمام شہداء کشمیر و پاکستان کے ایصال ثواب کیلئے قرآن خوانی کی تقاریب منعقد کی گئیں۔اس موقع پر جنرل سیکرٹری پنجاب محمد(بقیہ نمبر38صفحہ12پر)

زاہد حبیب قادری نے کہا ہے کہ کشمیر کی متنازعہ حیثیت کو بھارت کے کالے قانون سے تبدیل نہیں کیا جا سکتا،عالمی برادری کو کشمیریوں کا حق خود ارادیت دلانا ہوگا۔بھارتی حکمران اندرون بھارت متنازعہ شہریت قانون پر پھیلنے والے انتشار سے دنیا کی توجہ ہٹانے کیلئے کشمیر میں اوچھے ہتھکنڈے استعمال کر رہا ہے۔بھارت کو دنیا کی تیسری بڑی جمہوریت ہونے کا دعویٰ مسخ ہو چکا ہے بھارت کے اندر ہونے والے اقلیتوں پر مظالم نے بھارتی جمہوریت کا مکروہ چہرہ بے نقاب کر دیا ہے۔مسلمانوں کے قتل عام پر خاموشی اختیار کی جا سکتی ہے نہ ہی بھارت میں بسنے والے مسلمانوں کو تنہاء چھوڑا جا سکتا ہے۔ان خیالات کا اظہارسنی تحریک کے جنرل سیکرٹری پنجاب محمد زاہد حبیب قادری نے گزشتہ روز شہداء کشمیر و پاکستان کے ایصال ثواب کی منعقدہ تقریب مدینۃ العلم سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس مو قع پر صاحبزادہ علامہ قاری محمد اکرام اللہ نقشبندی مجددی و دیگر نے کہاکہ بھارتی مظالم سے شہید ہونے والے ہزاروں کشمیریوں نے اپنے خون کے نظرانے سے تحریک آزادیِ کشمیر کو ایک نیا موڈ دیا ہے۔نریندر مودی ہٹلر کی باقیات ہیں،مودی کی انتہائی پسندانہ سوچ نے بھارت میں اقلیتوں کیلئے آزادی اور خود مختاری کی راہ ہموار کردی ہے۔کشمیر کو پاکستان سے زیادہ دیر تک الگ نہیں رکھا جا سکتا،کشمیریوں کی آزادی کا وقت قریب آچکا ہے،بھارت کی تقسیم شروع ہو چکی۔محمد زاہد حبیب قادری نے کہاکہ پاکستان کو اپنی خارجہ پالیسی پر نظر ثانی کی اشد ضرورت ہے وزارت خارجہ محض زبانی جمع خرچ کرنے کی بجائے کشمیریوں کا مقدمہ عالمی برادری میں پیش کرنے کیلئے اپنے سفارت کاروں کو دنیا بھر مین متحرک کرے۔دنیا بھر میں موجودپاکستان کے سفارت کاروں کو چاہئے کہ وہ اپنی دینی ملی اور قومی ذمہ داری کو پورا کرتے ہوئے فوری طور پر کشمیر میں بھارتی قبضہ و مطالم اور بھارت میں متنازعہ قانون سے اقلیتوں اورخصوصا مسلمانوں میں پھیلی بے چینی اور بھارت کے ریاستی مظالم سے آگاہ کریں۔پاکستانی سفارت کاروں کو چاہئے کہ وہ مسئلہ کشمیر پر اقوام متحدہ اور سلامتی کونسل میں موجود قراردادوں پر پاکستانی موقف کی حمایت کیلئے راہ ہموار کرے تاکہ سلامتی کونل مسئلہ کشمیر کیلئے فوری طور پر حق خود ارادیت کی منظور قرار دادون پر عملدرآمد یقنی بنا سکے۔محمد زاہد حبیب قادری نے کہاکہ عالمی برادری کو پاکستانی افواج اور پاکستانی قو م کی جانب سے گزشتہ بارہ سالوں میں دہشت گردی کی جنگ میں دی گئی قربانیاں لا زوال ہیں۔دہشت گردی کیخلاف جنگ میں پاکستان کے عوام اور افواج کی قربانیوں سے آج دنیا بھر میں سلامتی قائم ہوئی ہے۔ دہشت گردی کے خلاف لڑی جانے والی جنگ میں پاکستانی معیشت کو بھی اربوں ڈالر ز کا خسارہ اٹھانا پڑا۔عالمی بنک،آئی ایم ایف پاکستان کو قرض دے کر احسان نہیں کرتے بلکہ اس کے بدلہ میں پاکستان سے کروڑوں ڈالرز کا منافع وصول کرنے کے ساتھ پاکستان کی قربانیاں بھی وصول کرتے ہیں۔محمد زاہد حبیب قادری نے کہاکہ بھارتی وزیر دفاع درحقیقت اپنی ناکامیوں اور نا اہلیوں کو چھپانے کیلئے لفظوں کی جنگ شروع کئے ہوئے ہیں

قادری

مزید : ملتان صفحہ آخر