نشتر: ڈاکٹرز‘ سکیورٹی گارڈز آمنے سامنے‘ صورتحال کشیدہ

نشتر: ڈاکٹرز‘ سکیورٹی گارڈز آمنے سامنے‘ صورتحال کشیدہ

  



ملتان (وقائع نگار)نشتر ہسپتال میں ڈاکٹروں کا سیکورٹی گارڈ سے آئے روز جھگڑا کرنا معمول بنا لیا ہے۔شعبہ نیفرالوجی کے ڈاکٹر نے گیٹ نمبر پانچ پر ڈیوٹی پر (بقیہ نمبر18صفحہ12پر)

موجود سکیورٹی گارڈ کے ساتھ تلخ کلامی کی۔جس پر نشتر ہسپتال کے ایم ایس نے ہتک آمیز رویہ اختیار کرنے پر ڈاکٹر سے وضاحت طلب کرلی ہے۔معلوم ہوا ہے کہ نشتر ہسپتال میں تقریبا دو روز قبل ڈاکٹروں کی تنظیم کی جانب سے تقریب منعقد کی گئی تھی۔جس میں شرکت کرنے کیلئے شعبہ نیفرالوجی کے ڈاکٹر ذیشان نے گیٹ نمبر پانچ سے ون وے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے اندر زبردستی داخل ہونے کی کوشش کی۔تو ڈیوٹی پر موجود سیکورٹی گارڈ نے ڈاکٹر کو روک لیا۔اور دوسری طرف سے آنے کا کہا۔مگر مذکورہ ڈاکٹر نے سیکورٹی گارڈ سے بدتمیزی شروع کردی۔ڈاکٹروں نے سیکورٹی گارڈ اور ڈاکٹر کے مابین صلح صفائی کے بعد معاملہ رفع دفع کروادیا۔مگر جب ایم ایس نشتر ہسپتال کو اس معاملے کے بارے میں علم ہوا۔تو انہوں نے ڈاکٹر ذیشان کے رویے پر برہمی کا اظہار کیا اور سکیورٹی گارڈ سے الجھنے پر ڈاکٹر ذیشان سے تحریری وضاحت طلب کرلی ہے۔ذرائع نے بتایا ہے ڈاکٹر ذیشان کا تعلق ڈاکٹروں کی تنظیم پی ایم اے سے ہے

صورتحال کشیدہ

مزید : ملتان صفحہ آخر