خیبرپختونخوا حکومت انتخابات میں سنجیدہ نہیں،معاملات ایسے نہیں چلنے دیں گے،چیف الیکشن کمشنر کے بلدیاتی انتخابات سے متعلق کیس میں ریمارکس

خیبرپختونخوا حکومت انتخابات میں سنجیدہ نہیں،معاملات ایسے نہیں چلنے دیں ...
خیبرپختونخوا حکومت انتخابات میں سنجیدہ نہیں،معاملات ایسے نہیں چلنے دیں گے،چیف الیکشن کمشنر کے بلدیاتی انتخابات سے متعلق کیس میں ریمارکس

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)الیکشن کمیشن آف پاکستان نے خیبرپختونخوامیں بلدیاتی انتخابات سے متعلق کیس میں آئندہ سماعت پرسیکرٹری لوکل گورنمنٹ کوذاتی حیثیت میں طلب کرلیا،چیف الیکشن کمشنر نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ خیبرپختونخوا حکومت انتخابات میں سنجیدہ نہیں،معاملات ایسے نہیں چلنے دیں گے،الیکشن کمیشن کے احکامات پرجواب دائرکریں،ٹائم لائن کےساتھ جواب دائرکریں، چیف الیکشن کمشنر نے کہا کہ خیبرپختونخواحکومت کیخلاف سخت آرڈرجاری کریں گے،معاملہ ایسے چلاتے رہے توآپ کیلئے ایشوبن جائےگا۔

تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن آف پاکستان میں خیبرپختونخوامیں بلدیاتی انتخابات سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی،چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ کی سربراہی میں پانچ رکنی بنچ نے سماعت کی ،رکن خیبرپختونخوا نے استفسار کیاکہ ایڈووکیٹ جنرل اورسیکرٹری لوکل گورنمنٹ کہاں ہیں؟،نمائندہ خیبرپختونخوا نے کہا کہ ایڈووکیٹ جنرل سپریم کورٹ اورسیکرٹری لاہورمیں ہیں۔

رکن خیبرپختونخوا نے استفسار کیا کہ خیبرپختونخواحکومت ایکٹ نافذنہیں کرسکی،الیکشن کیسے ہوں گے؟،خیبرپختونخواحکومت تاحال حلقہ بندیوں کے رولزبھی نہیں بناسکی،رکن خیبرپختونخوا نے کہاکہ کتنے عرصے میں نوٹیفکیشن جاری ہوجائےگا؟،پہلے رولزتوبنائیں تاکہ ہم جائزہ لے سکیں۔

چیف الیکشن کمشنر نے کہا کہ خیبرپختونخواحکومت انتخابات میں سنجیدہ نہیں،معاملات ایسے نہیں چلنے دیں گے،چیف الیکشن کمشنر نے کہاکہ الیکشن کمیشن کے احکامات پرجواب دائرکریں،ٹائم لائن کےساتھ جواب دائرکریں، چیف الیکشن کمشنر نے کہا کہ خیبرپختونخواحکومت کیخلاف سخت آرڈرجاری کریں گے،معاملہ ایسے چلاتے رہے توآپ کیلئے ایشوبن جائےگا۔

الیکشن کمیشن آف پاکستان نے آئندہ سماعت پرسیکرٹری لوکل گورنمنٹ کوذاتی حیثیت میں طلب کرلیا،الیکشن کمیشن نے سماعت 18 فروری تک ملتوی کردی۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد