سڑک کیلئے زمین نہ دینے پر سیاسی رہنما کا خاتون ٹیچر پر تشدد، رسی سے باندھ کر سڑکوں پر گھسیٹتا رہا

سڑک کیلئے زمین نہ دینے پر سیاسی رہنما کا خاتون ٹیچر پر تشدد، رسی سے باندھ کر ...
سڑک کیلئے زمین نہ دینے پر سیاسی رہنما کا خاتون ٹیچر پر تشدد، رسی سے باندھ کر سڑکوں پر گھسیٹتا رہا

  



کولکتہ (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست مغربی بنگال میں سڑک کیلئے زمین نہ دینے پر سیاسی رہنما نے اہل علاقہ کے ساتھ مل کر پرائمری سکول ٹیچر کو بد ترین تشدد کا نشانہ بنایا اور خاتون کو سڑکوں پر گھسیٹتے رہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ضلع دیناج پور میں ترنمول کانگریس پارٹی کے رہنما امل سرکار نے خاتون ٹیچر کو رسی سے باندھ کر گھسیٹا جس کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوچکی ہے۔ متاثرہ خاتون ٹیچر کے مطابق ان کے علاقے میں 12 فٹ کی سڑک بن رہی تھی جس کیلئے انہوں نے اپنی زمین بھی دی لیکن بعد میں منصوبہ تبدیل ہوا اور کہا گیا کہ سڑک 24 فٹ چوڑی ہوگی جس کی میں نے اور میری بہن نے مخالفت کی۔ یہ لوگ ہماری زمین ایکوائر کرنا چاہتے تھے لیکن ہم نے زمین دینے سے انکار کیا تو امل سرکار نے اہل علاقہ کے ساتھ مل کر ہم پر حملہ کردیا۔

ٰخاتون ٹیچر نے بتایا کہ اس کو رسی سے باندھ کر 30 فٹ تک گھسیٹا گیا اور اس دوران بد ترین تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔ سوشل میڈیا پر وائرل ویڈیو میں بھی دیکھا جاسکتا ہے کہ خاتون ٹیچر کو لوہے کے راڈوں سے مارا جارہا ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /جرم و انصاف