آئی سی سی کی جانب سے گوادر کرکٹ سٹیڈیم کی تعریف بھارتیوں کو ہضم نہ ہو سکی، سوشل میڈیا پر کیا کر رہے ہیں؟ جان کر ہر پاکستانی مسکرا اٹھے

آئی سی سی کی جانب سے گوادر کرکٹ سٹیڈیم کی تعریف بھارتیوں کو ہضم نہ ہو سکی، ...
آئی سی سی کی جانب سے گوادر کرکٹ سٹیڈیم کی تعریف بھارتیوں کو ہضم نہ ہو سکی، سوشل میڈیا پر کیا کر رہے ہیں؟ جان کر ہر پاکستانی مسکرا اٹھے
سورس: Twitter

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کی جانب سے گوادر کرکٹ سٹیڈیم کی تعریف بھارتیوں کو ہضم نہ ہو سکی جنہوں نے ریاست ہماچل پردیش میں واقع دھرم شالا سٹیڈیم کو زیادہ خوبصورت قرار دینا شروع کر دیا ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق آئی سی سی نے ایک ٹوئٹ کیا جس میں گوادر کرکٹ سٹیڈیم کی تعرف کی گئی  اور کہاگیا کہ اس جیسا کوئی دوسرا سٹیڈیم دکھاﺅ۔ یہی نہیں بلکہ اس کے بعد کئی غیر ملکی کرکٹرز کی جانب سے بھی اس سٹیڈیم کی خوبصورتی کی بے حد تعریف کی گئی۔ 

چند روز قبل حسن علی پر آئی سی سی کی ٹرولنگ پر شاباش کہنے والے بھارتی مداح اب پاکستانی سٹیڈیم کی تعریف پر تلملا اٹھے ہیں اور ایک نئی بحث کا آغاز ہو چکا ہے جس میں بھارتیوں نے یہ دعویٰ کیا کہ ان کے ہاں ریاست ہماچل پردیش کے شہر دھرم شالا میں موجود سٹیڈیم گوادر کے سٹیڈیم سے زیادہ خوبصورت ہے۔ 

واضح رہے کہ وزیراعلیٰ جام کمال خان نے گزشتہ برس بلوچستان کے تجارتی شہر گوادر میں موجود ’سینیٹر محمد اسحاق بلوچ کرکٹ سٹیڈیم‘ کا افتتاح کیا تھا۔ اس سٹیڈیم کے افتتاح کے بعد ہی اس کی تصاویر اور ویڈیو سوشل میڈیا کی زینت بنیں، لیکن ایک روز قبل کمپیئر فخر عالم کی جانب سے شیئر کی گئی ویڈیو اور تصاویر کے بعد اس کی خوبصورتی کا پھر سے چرچا شروع ہوگیا۔ 

پاکستان کے بغض میں بھارتی مداحوں نے زبردستی سرسبز پہاڑوں کے درمیان موجود سٹیڈیم کا موازنہ ساحل پر سفید خشک چٹانوں کے دامن میں بنے اس خوبصورت سٹیڈیم سے کرنا شروع کیا جو واقعی قابل دید ہے۔ 

بھارتیوں کی ہرزہ سرائی کا ثبوت اس سے بھی ملتا ہے جب پاکستانی کمنٹیٹر زینب عباس نے گوادر کرکٹ سٹیڈیم کا موازنہ جنوبی افریقہ کے نیولینڈز سے کرتے ہوئے ٹوئٹ کیا تو اس میں بھی زبردستی بھارتی مداح گھس گئے اور دھرم شالا کرکٹ سٹیڈیم کی تصاویر شیئر کرنے لگے۔ 

مزید :

کھیل -