ایمازون کے بانی اور دنیا کے امیر ترین آدمی جیف بیزوس نے کمپنی کی سربراہی چھوڑنے کا اعلان کردیا، اس فیصلے کی وجہ بھی بتادی

ایمازون کے بانی اور دنیا کے امیر ترین آدمی جیف بیزوس نے کمپنی کی سربراہی ...
ایمازون کے بانی اور دنیا کے امیر ترین آدمی جیف بیزوس نے کمپنی کی سربراہی چھوڑنے کا اعلان کردیا، اس فیصلے کی وجہ بھی بتادی
سورس: Instagram

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) ایمازون کے بانی جیف بیزوس نے کمپنی کے قیام کے 27سال بعد بالآخر چیف ایگزیکٹو آفیسر (سی ای او)کے عہدے سے مستعفی ہونے کا اعلان کر دیا۔ میل آن لائن کے مطابق دنیا کے دوسرے امیر ترین آدمی جیف بیزوس نے 27سال قبل اپنی سابق اہلیہ میکینزی سکاٹ کے ساتھ مل کر ایمازون کی بنیاد رکھی تھی۔ تب سے وہ کمپنی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر چلے آ رہے تھے۔ اب ان کی جگہ 53سالہ اینڈی جیزی ایمازون کے چیف ایگزیکٹو آفیسر کا عہدہ سنبھالیں گے جو اس وقت چیف ایگزیکٹو آفیسر آف ایمازون ویب سروسز کے عہدے پر فائز ہیں۔

57سالہ جیف بیزوس نے یہ اعلان ایمازون کے 13لاکھ ملازمین کو لکھے گئے ایک خط میں کیا ہے تاہم انہوں نے اس خط میں یہ بھی واضح کیا ہے کہ وہ ایمازون کی سربراہی چھوڑ کر ریٹائر نہیں ہو رہے۔ انہوں نے کمپنی کی سربراہی چھوڑنے کی وجہ بیان کرتے ہوئے لکھا ہے کہ وہ اپنے ان پراجیکٹس پر توجہ مرکوز رکھنا چاہتے ہیں جو ان کا جنون ہیں۔ ان پراجیکٹس میں ڈے 1فنڈ ، بیزوس ارتھ فنڈ، بلیو اوریجن، دی واشنگٹن پوسٹ و دیگر شامل ہیں۔ رپورٹ کے مطابق ایمازون نے جیف بیزوس کی قیادت میں بے مثال ترقی کی اور اس کا شمار تاریخ کی کامیاب ترین کمپنیوں میں ہوتا ہے، جس کے اثاثے اس وقت 1.7ٹریلین ڈالر سے زائد ہو چکے ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -