پنجاب بھر میں ٹائیفائیڈ سے بچاو کے لیے حفاظتی مہم جاری، والدین کے لیے ضروری خبر آگئی

پنجاب بھر میں ٹائیفائیڈ سے بچاو کے لیے حفاظتی مہم جاری، والدین کے لیے ضروری ...
پنجاب بھر میں ٹائیفائیڈ سے بچاو کے لیے حفاظتی مہم جاری، والدین کے لیے ضروری خبر آگئی

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن )ٹائیفائیڈ سے بچاو کےحفاظتی ٹیکوں کی مہم پنجاب کے 12 اضلاع میں جاری ہے،ایک روز میں   10لاکھ 54ہزار185بچوں کو حفاظتی ٹیکے لگائے گئے۔

واضح رہے کہ پنجاب حکومت کی جانب سے پہلی بار ٹائیفائیڈ کی ویکسین مفت لگائی جارہی ہے اسے سے قبل یہ ویکیسن صرف ہسپتالوں میں مریضوں کے لیے ہی میسر تھی۔مہم کے دوسرے روز ٹائیفائیڈ کے ٹیکے لگائے جانے کا 12 اضلاع کا ٹارگٹ 9لاکھ 95 ہزار 356 بچے تھاجبکہ  10لاکھ 54ہزار185بچوں کو حفاظتی ٹیکے لگائے گئے۔

 ڈائریکٹر ہیلتھ سروسزڈاکٹر بشیر احمدنے بتایاکہ مہم کے دوسرے  روز ٹیکے لگانے کا تناسب 106 فیصد رہا۔ ٹارگٹ سے زیادہ انجیکشن لگنے والے بچوں میں زیادہ تعداد طالب علموں کی تھی ۔ مہم کے شروع  میں تمام سکول کھلنے کا فائدہ اٹھاتے ہوئے سکولوں کے بچوں کو ٹیکے لگائے جا رہے ہیں۔تمام سکولوں میں بچوں کو ٹائیفائیڈ سے بچاوء کے ٹیکے لگانے کے بعد ٹیمیں کمیونٹی میں جا کر اپنے ٹارگٹ پورے کریں گی۔اللہ کے فضل و کرم سے کسی ضلع سے کسی بھی ناخوشگوار واقع کی اطلاع نہیں آئی اور بچوں کے والدین اس مہم پر اعتماد کا اظہار کررہے ہیں ۔

  ڈاکٹر بشیر احمد نے والدین سے اپیل کہ وہ  اپنے 9ماہ سے15سال تک کی عمر کے بچوں کو  ٹائیفائیڈ سے بچاءو کے حفاظتی  ٹیکے ضرور لگوائیں اور مہم کو کامیاب کرنے میں محکمہ صحت کے ساتھ تعاون کریں۔

مزید :

قومی -