افغان فورسز نے پورے ملک کی سکیورٹی کی ذمہ داری سنبھال لی، پینٹا گون

افغان فورسز نے پورے ملک کی سکیورٹی کی ذمہ داری سنبھال لی، پینٹا گون

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 واشنگٹن(اظہر زمان،بیوروچیف) امریکی اور اتحادی افواج کے انخلاء کے بعد افغان سکیورٹی فورسز نے دو جنوری سے پورے افغانستان کی سکیورٹی کی ذمہ داری باقاعدہ سنبھال لی۔ پینٹا گون ذرائع نے یہاں بتایا ہے کہ جنگ کے خاتمے کے بعد افغانستان میں تربیت اور تکنیکی سپورٹ کے لئے نوہزار آٹھ سو امریکی فوجیوں نے افغانستان میں باقی رہ جانا تھا لیکن جامع سٹریٹجک معاہدے پر دستخط کے بعد نئی افغان حکومت کی درخواست پر اس میں ایک ہزار کااضافہ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ۔ اس طرح دو جنوری کی صورت حال کے مطابق اب افغانستان میں دس ہزار آٹھ سو امریکی فوجی باقی رہ گئے ہیں۔ پینٹا گون ذرائع کے مطابق آخری امریکی دستہ یکم جنوری کو افغانستان سے واپس امریکہ روانہ ہو گیا۔ اس کے بعد کابل میں سکیورٹی چارج افغان فورسز کے حوالے کرنے کے لئے ایک رسمی تقریب ہوئی ۔ پینٹا گون ذرائع نے اس تقریب کی تفصیلات جاری کی ہیں۔ افغانستان کے نیشنل ڈائریکٹوریٹ آف سکیورٹی کے سربراہ رحمت اللہ نبیل نے اس موقع پر بتایا کہ ہم نے آئندہ سالوں کے لئے تفصیلی سکیورٹی پروگرام واضح کیا ہے جس پر عمل درآمد کے نتیجے میں سکیورٹی کی صورتحال میں یقیناًبہتری آئے گی۔ انہوں نے کہا کہ آج سے افغان سکیورٹی فورسز ملک کا سکیورٹی نظام سنبھال رہی ہیں۔ یہ انتہائی مشکل کام ہے تاہم امید ہے کہ وہ اس میں کامیاب رہے گی۔

مزید :

صفحہ آخر -