اتفاق یا سازش ،2015کے بارے میں امریکی خفیہ ادارے کی پیش گوئیاں جو حیران کن حد تک درست ثابت ہوئیں

اتفاق یا سازش ،2015کے بارے میں امریکی خفیہ ادارے کی پیش گوئیاں جو حیران کن حد ...
اتفاق یا سازش ،2015کے بارے میں امریکی خفیہ ادارے کی پیش گوئیاں جو حیران کن حد تک درست ثابت ہوئیں

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

واشنگٹن (نیوز ڈیسک) آج سے تقریباً 15 سال قبل سن 2000ء میں امریکی خفیہ ایجنسی سی آئی اے نے ایک رپورٹ شائع کی جس میں پیشن گوئیاں کرتے ہوئے بتایا گیا کہ 2015ء میں دنیا کیسی ہو گی۔ یہ رپورٹ 70 صفحات پر مشتمل تھی اور اس کے متعلق مغروف اخبار "The Telegraph" نے ایک مضمون بھی شائع کیا۔ اس کے چیدہ چیدہ نکات پیش خدمت ہیں اور یہ فیصلہ آپ خود کریں کہ انہیں پیشن گوئیاں کہا جائے یا کچھ اور۔
اے ٹی ایم کا پن کوڈ چار ہندسوں پر مشتمل کیوں ہوتاہے ؟وجہ جان کر آپ ہنسنے پر مجبور ہو جائیں گے جاننے کیلئے کلک کریں
1:۔’’بین الاقوامی معاملات حکومتوں کے بجائے بڑی حد تک طاقتور غیر حکومتی عناصر اور گروہوں کے ہاتھ میں آ جائیں گی‘‘۔
یقیناًآج کئی شدت پسند اور عسکریت پسند گروپ بڑی بڑی حکومتوں سے زیادہ طاقتور ہو چکے ہیں۔
2:۔ ’’2015ء تک دہشت گردوں کے ہتھیار اور چالیں نہایت پیچیدہ ہو جائیں گی اور وہ بڑے پیمانے پر ہلاکتیں کرنے کے قابل ہو جائیں گے‘‘۔ بدقسمتی سے یہ پیشن گوئی تو چند ماہ بعد نیویارک میں 9/11 حملوں کی صورت میں ہی پوری ہو گئی۔
3:۔ ’’دنیا کی آبادی 7 رب تک پہنچ جائے گی‘‘۔ درست۔
4:۔ ’’توانائی ذرائع ضرورت پوری کرنے کیلئے کافی ہوں گے‘‘۔ آج کمپنیاں نئے ذخائر کی دریافت نہیں کر رہیں اور تیل دنیا میں عام دستیاب ہے۔
5:۔ ’’چین کی معیشت یورپی معیشت کو پیچھے چھوڑ دے گی‘‘۔ آج چینی معیشت نے یورپ کیساتھ ساتھ امریکہ کو بھی پیچھے چھوڑ دیا ہے۔
6 :۔ ’’عالمی معیشت میں یورپ کا اثرورسوخ امریکہ کے برابر نہیں آ سکے گا ‘‘۔ یہ بات بھی درست ثابت ہوئی ہے۔
7:۔ ’’ایڈز، قحط اور معاشی و سیاسی بحران افریقی ممالک کی آبادی کو گھٹانا شروع کر دیں گے‘‘۔ آج افریقہ میں ایبولا وائرس ہزاروں افراد کی جان لے رہا ہے اور اکثر افریقی ممالک بدترین معاشی و سیاسی بحران کا شکار ہیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -