ایمنسٹی سکیم خلاف قانون ،حکمرانوں نے کا لا دھن جمع کرنے والوں سے مک مکا کر لیا :سراج الحق

ایمنسٹی سکیم خلاف قانون ،حکمرانوں نے کا لا دھن جمع کرنے والوں سے مک مکا کر ...

لاہور( نمائندہ خصوصی)امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ حکمرانوں نے کالادھن جمع کرنے والوں سے مک مکا کر لیا کیونکہ ایمنسٹی سکیم آئین کے آرٹیکل 4 اور اس کے سیکشن 25کی کھلی خلاف ورزی ہے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے وزیر خزانہ کی طرف سے کالا دھن سفید کرنے کے نام پر قوم کے کھربوں روپے ڈکار نے کے پالیسی بیان کی شدید مذمت کرتے ہوئے کیا ۔سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ ایمنسٹی سکیم خود حکمرانوں کے ان انتخابی وعدوں کے بھی خلاف ہے جو انہوں نے اپنے انتخابی جلسوں میں یہ کہہ کر کیے تھے کہ وہ ’’قومی خزانے کو نقصان پہنچانے والوں کے پیٹ پھاڑ کر قومی دولت نکلوائیں گے۔‘‘ مگرٹیکس نہ دینے والوں کو نوا ز کر ترغیب دی جارہی ہے کہ10/15سال کالادھن جمع کریں اور پھر چند لاکھ د ے کر پاک صاف ہوجائیں۔انہوں نے کہا کہ اب لٹیروں کا کلب لوٹی دولت کا ایک فیصد دیکر حکومت سے معصومیت کا سرٹیفیکیٹ حاصل کرے گا اورکوئی اسے پوچھنے والا نہیں ہوگا۔سراج الحق کا کہنا تھا کہ حکومتی رویہ ملکی دولت لوٹنے والوں کو کھلا لائسنس دینے کے مترادف ہے اورلائسنس بھی اتنا سستا کہ کرپٹ مافیا خوشی سے نہال ہوگا ۔ان کا مزید کہنا تھا کہ وزیر خزانہ پہلے اپنے سابقہ دور میں ’’قرض اتاروملک سنوارو‘‘سکیم میں اکٹھے ہونے والے کھربوں روپے کا حساب دیں ۔

مزید : صفحہ اول