کالا پتھر کی زندگی ختم کرنے کیلئے خریداری ‘ سال 2016 میں 604 افراد ہسپتالوں میں داخل

کالا پتھر کی زندگی ختم کرنے کیلئے خریداری ‘ سال 2016 میں 604 افراد ہسپتالوں ...

  

ملتان ( وقائع نگار ) حکومتی اداروں کی عدم توجہی کے باعث کالا پتھر کی فروخت پر موثر چیک اینڈ بیلنس نہ ہونے کیوجہ سے اسے (بقیہ نمبر10صفحہ12پر )

زندگی ختم کرنے کیلئے استعمال کی شرح تیزی سے بڑھ رہی ہے‘نشتر ہسپتال ملتان سمیت جنوبی پنجاب میں کالا پتھر کھانے کے باعث سال 2016 میں 604 مریضوں کو داخل کروایا گیا جس میں زیادہ تعداد خواتین کی تھی ‘ 604 مریضوں میں سے 300 مریض اپنی جان کی بازی ہار گئے ۔ جنوری میں 17 ‘ فروری میں 21 ‘ مارچ میں 26 ‘ اپریل میں 47 ‘ مئی میں 71 ‘ جون میں 65 ‘ جولائی میں 76 ‘ اگست میں 62 ‘ ستمبر میں 46 ‘ اکتوبر میں 66 ‘ نومبر میں 56 اور دسمبر میں 51 مرد اور خواتین کالا پتھر کھانے کیوجہ سے نشتر ہسپتال میں داخل ہوئے ‘ زندہ بچ جانے والوں میں اکثریت کے گردے ختم ہو گئے ۔

کالا پتھر

مزید :

ملتان صفحہ آخر -