دھند کے باعث حادثات میں 6افراد ہلاک ،7شدید زخمی

دھند کے باعث حادثات میں 6افراد ہلاک ،7شدید زخمی

  

ملتان، وہاڑی، میاں چنوں، کوٹ سلطان، شاہ جمال، رحیم یار خان، راجن پور(خبر نگار، نمائندگان) جنوبی پنجاب کے متعدد علاقوں میں دھند کا راج ، حد نگاہ صفر،معمولات زندگی درہم (بقیہ نمبر14صفحہ12پر )

برہم ،ٹریفک حادثات میں 6 افراد دم توڑ گئے اس سلسلہ میں ملتان سے خبر نگار کیمطابق ملتان اور گردو نواح میں شدید دھند کا راج برقرار حد نگاہ صفر ہونے کے باعث معمولات زندگی اور ٹریفک کا نظام درہم برہم ہو کر رہ گئے سردی کی شدت بھی بڑھ گئی صبح 7بجے سے 9بجے تک دیکھنے کی صلاحیت صرف 20میٹر تک محدود ہو کررہ گئی اور دن کے وقت دیکھنے کی صلاحیت میں بتدریج اضافہ ہوا گذشتہ ر وز زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 17 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا ملتان اور نواحی علاقے چند دنوں سے شدید دھنھ کی لپیٹ میں ہیں جس سے ٹریفک کا سسٹم اور معمولات زندگی مفلوج ہو کر رہ گئے ہیں اتوار اور سوموار کی درمیانی شب ملتان میں شروع ہونے والا شدید دھند کا سلسلہ سوموار کی دوپہر تک جاری رہا مقامی محکمہ موسمیات کیمطابق آئندہ چوبیس گھنٹوں کے دوران بھی موسم سرد و خشک رہنے اور دھند چھائے رہنے کا امکان ہے وہاڑی سے بیورورپورٹ اور نامہ نگار کیمطابق شہر اور گرد ونواح میں تیسرے روز بھی شدید دھند کاراج رہا اور حدنگاہ صفر رہا گیا جس کی وجہ سے مسافروں کی مشکلات میں اضافہ ہونے لگا گنے سے لوڈ ٹرالر کی وجہ سے ٹریفک متاثر ہو تی رہی میاں چنوں سے نمائندہ خصوصی کیمطابق میاں چنوں جنڈیالی روڈ پر شدید دھند کے باعث موٹر سائیکل اور کار میں ٹکر سے موٹر سائیکل سوار دو افراد عاصم اور نذیر شدید زخمی ہو گئے ،دوسرا حادثہ نیشنل ہائی وے پر پیش آیا جس میں کار اور کیری ڈبہ میں تصادم کے نتیجے میں دو افراد شدید زخمی ہو گئے ،زخمیوں کو تحصیل ہسپتال میاں چنوں پہنچا دیا گیا۔ کوٹ سطلان سے نامہ نگار کیمطابق سلطان کے نشیبی علاقہ خان والا میں اٹھ مہار کے مقام پر 50سالہ شہری 5بچوں کا باپ محمدرمضان رٹہ درخت سے لکڑیاں کاٹ رہا تھا کہ اچانک پاؤں پھسلنے سے نیچے جا گرا جس سے وہ مو قع پر ہی جاں بحق ہو گیا ۔ شاہ جمال سے نامہ نگار کیمطابق شاہ جمال اورگردونواح میں دھند کا راج حادثات میں متعددافرادزخمی۔شاہ جمال اورگردونواح میں صبح سے شدیددھند کے باعث حدنگاہ صفر رہ گئی جس کی وجہ سے گاڑیوں اورموٹرسائیکلوں کے آپس میں ٹکرانے سے نوید، عدنان، خدابخش،ک بی بی،نعیم اختر،اکمل ،مسزطارق، محمدطارق، عاشق،وسیم،کریم بخش اور شاہد زخمی ہوگئے جن کا علاج جاری ہے ۔ رحیم یارخان سے ڈسٹرکٹ رپورٹر کے مطابق پہلاحادثہ کندھ کوٹ کے نزدیک مسافر بسوں کے ہولناک تصادم میں وزیرستان کے رہائشی 60سالہ رحم جانہ بی بی اور40سالہ بہادرالدین اورکندھ کوٹ کارہائشی45سالہ حمداللہ شدیدزخمی ہوگئے۔دوسرا حادثہ اقبال آباد کے رہائشی 26سالہ شکیل احمد کے ساتھ پیش آیا جوٹھل حمزہ کے قریب موٹرسائیکلوں کے ہولناک تصادم میں شدید زخمی ہوگئے۔ تیسرا حادثہ خانپور کے رہائشی 20سالہ شہزاد احمد کے ساتھ پیش آیا جو اپنی موٹرسائیکل پرسوار ہوکر کام کے سلسلے میں جارہاتھا کہ اسی دوران تیز رفتار مسافر کوچ نے بے قابو ہوکر ٹکر ماردی جس کے نتیجہ میں وہ شدید زخمی ہوگیا جبکہ چوتھا حادثہ رکن پور کے رہائشی 15سالہ محمد فہیم کے ساتھ پیش آیا جو اپنی موٹرسائیکل پرسوارہوکر قومی شاہراہ پر جارہاتھا کہ اسی دوران پیچھے سے آنے والے تیزرفتارڈالا ویگن کے کراسنگ کے دوران سائیڈ مار کر سڑک پر گرادیا جس کے نتیجہ میں وہ شدیدزخمی ہوگیا جہاں طبی امداد کے باوجود رحم جانہ بی بی، بہادر الدین، شکیل احمد،شہزاد احمد اور محمد فہیم زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑگئے جبکہ مسافر بسوں کے تصادم میں زخمی ہونے والا کندھ کوٹ کارہائشی حمداللہ کوایمرجنسی وارڈ میں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔ محمد پور کارہائشی چارماہ کاکمسن محمد حسین جسے نمونیا میں مبتلا ہوجانے پر ورثاء نے طبی امداد کے لئے شیخ زید ہسپتال کے ایمرجنسی کے چلڈرن وارڈ منتقل کردیا جہاں طبی امداد کے باوجود محمد حسین جانبر نہ ہوپایا اور دم توڑگیا۔ راجن پور سے ڈسٹرکٹ رپورٹر کیمطابق راجن پور شہر اور گردو نواح میں شدید دھند ،حد نگاہ صفر رہی ،دھند کی وجہ سے سکولوں اور دفاتر میں حاضری انتہائی کم رہی ،دھند کی وجہ سے سردی میں اضافہ ہو گیا مارکیٹ اور بازار بھی سنسان رہے،انڈس ہائی وے پر ٹریفک کی روانی شدید متاثر رہی کئی مقامات پر تو ٹریفک کا بہاؤ بالکل رُکا رہا۔

دھند حادثات

مزید :

ملتان صفحہ آخر -