ڈیفنس :کارحادثہ میں شہید پولیس اہلکار کے تمام ملزمان گرفتار

ڈیفنس :کارحادثہ میں شہید پولیس اہلکار کے تمام ملزمان گرفتار

لاہور(خبرنگار)انویسٹی گیشن پولیس ڈیفنس نے نیو ایئر نائٹ کے موقع پر کار حادثہ میں شہید پولیس اہلکار کے تمام ملزمان کو گرفتار کر لیا ہے۔ ملزمان میں سعید، طاہر اور کار مالک بااثر شخصیت مصطفی منیر شامل ہیں۔ سی سی پی او لاہور کی ہدایت پر واقعہ کی مکمل تفتیش کیلئے ڈی آئی جی انویسٹی گیشن سلطان احمد چوہدری کی زیرصدارت تحقیقاتی ٹیم تشکیل دی گئی۔ گزشتہ روز شہید پولیس اہلکار کی نمازِ جنازہ سرکاری اعزاز کے ساتھ ادا کر دی گئی۔ واقعہ میں ملوث زخمی پولیس اہلکار کو بہترین طبی سہولیات فراہم کی جارہی ہیں۔ تفصیلات کے مطابق 31 دسمبراوریکم جنوری کی درمیانی رات تھانہ ڈیفنس اے کے علاقہ میں نامعلوم افراد نے ناکہ پر تعینات دو پولیس اہلکاروں کو تیز رفتار گاڑی سے کچل دیا جس کے نتیجہ میں ایک اہلکار مستنصر احمد موقع پر شہید جبکہ دوسرا اہلکار شدید زخمی ہوگیا تھا۔ سی سی پی او لاہورکیپٹن(ر) محمد امین وینس نے واقعہ کافوری نوٹس لیتے ہوئے ٹیمیں تشکیل دیں جنہوں نے فوری جائے حادثہ کا ملاحظہ کیا اور تمام شواہد اکٹھے کئے۔ قانونی ماہرین کی مشاورت کے بعد ایف آئی آر میں دہشت گردی کی دفعہ 7ATA اور پولیس مقابلہ کی دفعہ 353 بھی شامل کی گئی۔ سی سی پی او لاہور کی ہدایت پر بنائی گئی تحقیقاتی ٹیم میں ایس ایس پی انویسٹی گیشن غلام مبشر میکن اور ایس پی کینٹ انویسٹی گیشن ڈاکٹر انوش مسعود چودھری شامل تھے جن کی نگرانی میں انچارج انویسٹی گیشن تھانہ ڈیفنس اے انسپکٹر اسرار حسین نے پولیس اہلکار مستنصر کو شہید اور ساتھی اہلکارزخمی کرنے والے تین ملزمان سعید ، طاہر اور کارمالک باثر شخصیت مصطفی منیر کو گرفتار کر لیا ہے۔

مزید : علاقائی