پیسے بچانے کا جاپانی طریقہ جانئے جس پر عمل کرکے آپ کا مہینے کا خرچہ باآسانی 35 فیصد کم ہوسکتا ہے

پیسے بچانے کا جاپانی طریقہ جانئے جس پر عمل کرکے آپ کا مہینے کا خرچہ باآسانی 35 ...
پیسے بچانے کا جاپانی طریقہ جانئے جس پر عمل کرکے آپ کا مہینے کا خرچہ باآسانی 35 فیصد کم ہوسکتا ہے

  

ٹوکیو(مانیٹرنگ ڈیسک) آمدن میں سے کچھ بچت کرنا ہر ایک کی خواہش ہوتی ہے لیکن کم آمدنی والے لوگوں کے لیے یہ کام اتنا آسان نہیں ہوتا۔ تاہم جاپان میں بچت کا ایک طریقہ گزشتہ ایک صدی سے رائج ہے اور اکثر جاپانی شہری اس پر عمل کرکے بچت کرتے ہیں۔ آپ بھی بچت کرنا چاہتے ہیں تو یہ آزمودہ طریقہ آپ کے لیے فائدہ مند ثابت ہو سکتا ہے اور آپ اس کے ذریعے اپنے اخراجات 35فیصد تک کم کر سکتے ہیں۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق اس طریقے کا نام ’کا کیبو‘ (Kakeibo)ہے جو 1904ءمیں جاپان کی صحافی خاتون ’موتوکو ہانی‘نے وضع کرکے اپنے آرٹیکل میں شائع کیا تھا۔

اگر پاکستانی ڈھیروں روپے کمانا چاہتے ہیں تو یہ چیز جو پاکستانیوں کو بالکل بھی پسند نہیں چین بھیجنا شروع کردیں، چین سے شاندار اعلان ہوگیا

اس طریقے کے تحت جاپانی شہری اپنے اخراجات کو چار حصوں میں تقسیم کرتے ہیں۔ پہلا حصہ ’بقاء‘ (Survival)کا ہے جس میں خوراک، ٹرانسپورٹ اور میڈیکل سمیت ہر وہ چیز آتی ہے جو انتہائی لازمی ہے۔ دوسری کیٹیگری آپشنل ہے جس میں بازار سے کھانااور شاپنگ وغیرہ آتے ہیں۔ تیسری کیٹیگری ثقافت ہے جس میں کتابیں، موسیقی، فلمیں و دیگر اسی نوع کی چیزیں آتی ہیں۔ چوتھی کیٹیگری ’ایکسٹرا‘ کی ہے تحائف اور مختلف اشیاءکی مرمت وغیرہ آتے ہیں۔

جاپانی ہر مہینے کے آغاز میں بیٹھ کر اپنی آمدنی کو سامنے رکھتے ہوئے ان کیٹیگریز میں اپنے اخراجات درج کرتے ہیں۔ یہ درج کرنے سے پہلے وہ خود سے چار سوال کرتے ہیں۔ ’میرے پاس کتنی رقم ہے؟‘ ’مجھے کتنی بچت کرنی ہے؟‘ ’میرے اخرات اصل میں کتنے ہیں؟‘ ’میں کن کیٹیگریز میں زیادہ بچت کر سکتا ہوں؟‘اس کے بعد وہ چار لفافے لیتے ہیں اور ہر کیٹیگری کے اخراجات کی رقم ایک ایک لفافے میں ڈال دیتے ہیں اور اس سے نکال کر مہینہ بھر استعمال کرتے رہتے ہیں۔ بچت کی رقم وہ مہینے کے آغاز میں ہی بینک اکاﺅنٹ میں جمع کروا دیتے ہیں۔اس طرح انہیں بخوبی معلوم ہوتا ہے کہ وہ کس چیز پر کتنا خرچ کر رہے ہیں اور اس کے لیے ان کے پاس باقی رقم کتنی بچی ہے۔

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس