الیکشن کمیشن نے انتخابی فہرستوں کی نظرثانی کے احکامات جاری کردیئے

الیکشن کمیشن نے انتخابی فہرستوں کی نظرثانی کے احکامات جاری کردیئے

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)الیکشن کمیشن نے 31 دسمبر 2018 تک ووٹ کی منتقلی نہ کروانے والے شہریوں کو یہ سہولت دی ہے کہ انتخابی فہرستوں کی نظرثانی کے دوران رائے دہندگان شناختی کارڈ پر درج کسی بھی پتہ کے مطابق اپنا ووٹ 28 فروری 2019 تک منتقل کروا سکیں گے۔الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری اعلامیہ کے مطابق کمیشن نے آئین کے آرٹیکل 219 اے اور انتخابی قانون 2017 کے سیکشن 36 کے تحت حاصل اختیارات کو بروئے کار لاتے ہوئے انتخابی فہرستوں کی نظرثانی کے احکامات جاری کردیئے ہیں تاکہ ووٹ کے بنیادی حق کا تحفظ یقینی بنایا جاسکے اور رائے دہندگان کے ووٹ کے اندراج کو شناختی کارڈ پر درج پتوں کے مطابق منتقل کیا جاسکے۔انتخابی فہرستوں پر نظرثانی کے اس عمل میں ایسے تمام ووٹ (جو کہ شناختی کارڈ پر درج مستقل یا عارضی پتہ کے علاوہ کسی دیگر پتہ پر درج ہیں) کی نشاندہی کی جائے گی اور ان کو شناختی کارڈ پر درج پتوں پر منتقل کیا جائے گا۔اس عمل کے دوران رائے دہندگان کو بھی یہ سہولت دی جارہی ہے کہ وہ شناختی کارڈ پر درج کسی بھی پتہ کے مطابق اپنا ووٹ منتقل کروا سکیں۔ اس کیلئے ووٹ رجسٹریشن افسر، ضلعی الیکشن کمشنر یا اسسٹنٹ رجسٹریشن افسر کے دفاتر میں 28 فروری 2019 تک فارم نمبر 21 جمع کروا سکتے ہیں

الیکشن کمیشن

مزید : صفحہ اول