دہلی میں اکثر مسلم قبرستانوں پر قبضہ ، میتوں کیلئے جگہ ختم

دہلی میں اکثر مسلم قبرستانوں پر قبضہ ، میتوں کیلئے جگہ ختم

نئی دہلی(صباح نیوز) بھارتی دارالحکومت نئی دہلی میں آئندہ دو برس میں قبرستانوں میں مسلمانوں کیلئے میت کو دفنانے کی جگہ نہیں (بقیہ نمبر36صفحہ7پر )

ہوگی۔ منارٹی کمیشن کے چیئرمین ظفرا لاسلام خان نے کہا کہ جگہ کی کمی قبرستانوں کی زمین پر قبضے کے باعث ہوئی ۔نئی دہلی میں خصوصی گفتگو کرتے ہوئے منارٹی کمیشن کے چیئرمین ظفر الاسلام خان نے کہا کہ نئی دہلی میں قبروں کیلئے جگہ کی کمی کی مسلسل شکایات موصول ہورہی ہیں، اگر قبرستانوں کی زمین پر قبضے کی یہی صورتحال رہی تو آئندہ 2 سال میں میت دفنانے کی جگہ نہیں بچے گی۔انہوں نے کہاکہ قبضے کے باعث دہلی کے اکثر قبرستان مٹ گئے اور وہاں آبادی ہوگئی ۔ انہوں نے کہا کہ نئی دہلی میں مسلمانوں کی آبادی تیرہ فیصد ہے اور یہ مسلسل بڑھ رہی ہے لیکن قبرستانوں کی کمی ہے۔ انہوں نے کہاکہ مسلم وقف بورڈ کی ویب سائٹ پر نئی دہلی میں چھ سو چوبیس قبرستانوں کے نام موجود ہیں لیکن ان تمام پر قبضہ ہوچکا ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر