2018کے فضائی حادثات کے نتیجے میں 556افراد ہلاک ، عالمی سیفٹی نیٹ ورک

2018کے فضائی حادثات کے نتیجے میں 556افراد ہلاک ، عالمی سیفٹی نیٹ ورک

نیویارک(این این آئی)سال 2017 کے مقابلے میں گذشتہ سال جان لیوا فضائی حادثات میں اضافہ دیکھا گیا، لیکن اس کے باوجود سال 2018 تاریخ میں اب بھی نواں محفوظ ترین سال رہا ہے ۔میڈیارپورٹس کے مطابق ایوی ایشن سیفٹی نیٹ ورک (اے ایس این) کی رپورٹ میں بتایاگیا کہ گذشتہ سال فضائی حادثات میں کل 556 افراد ہلاک ہوئے جبکہ 2017 میں یہ تعداد 44 تھی۔گذشتہ سال سب سے بدترین حادثہ اکتوبر میں (بقیہ نمبر46صفحہ7پر )

پیش آیا جب انڈونیشیا میں لائن ایئر پلین کو حادثہ پیش آیا جس کے نتیجے میں 189 افراد مارے گئے۔تاریخ میں 2017 کمرشل ائیرلائنز کے لیے سب سے محفوظ ترین سال رہا جس میں ایک بھی مسافر طیارے کو حادثہ نہیں پیش آیا تھا۔اے ایس این کے چیف ایگزیکٹیو ہیرو رینٹر کا کہنا تھا کہ اگر حادثات کی شرح گذشتہ دس سالوں کی طرح برقرار رہتی تو گذشتہ برس 39 جان لیوا حادثات ہوتے،اسی طرح اگر یہ شرح سال 2000 جیسی رہتی تو ایسے حادثات کی تعداد 64 ہوتی۔ اس سے لگتا ہے کہ گذشتہ دو دہائیوں میں سیفٹی کے معاملات میں کافی حد تک بہتری آئی ہے۔لیکن اے ایس این کا کہنا تھا کہ جہاں بات قابو سے باہر ہونے والے (لاس آف کنٹرول) حادثات کی ہے تو یہ فضائی صنعت کے لیے شدید تشویش کا باعث تھی، کیونکہ گذشتہ پانچ سالوں میں 25 بدترین حادثات میں سے 10 ایسے ہی تھے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر