عز یر بلوچ کو عدالت پیش نہ کرنے پر سندھ ہائیکورٹ وفاق پر برہم

عز یر بلوچ کو عدالت پیش نہ کرنے پر سندھ ہائیکورٹ وفاق پر برہم

کراچی(آن لائن)سندھ ہائیکورٹ نے عزیر بلوچ کو ٹرائل کورٹ میں پیش نہ کئے جانے سے متعلق درخواست پر سیکریٹری دفاع سے 22 جنوری تک جواب طلب کرلیا،گزشتہ روز مذکورہ(بقیہ نمبر39صفحہ12پر )

درخواست کی سماعت کے دوران رینجرز پراسیکیوٹر نے سندھ ہائیکورٹ میں جواب جمع کراد یا اورعدالت کو آگاہ کیا کہ عزیر بلوچ ہمارے پاس نہیں جبکہ وفاقی حکومت کی جانب سے جواب جمع نہ کرانے پر عدالت نے برہمی کا اظہار کر تے ہوئے ریمارکس دیئے کہ عزیر بلوچ کو کہاں رکھا گیا ہے کیوں نہیں بتایا جارہا؟ بتایا جائے عزیر بلوچ کو ٹرائل کورٹ میں کیوں پیش نہیں کیا جارہا؟ اس موقع پرعدالت نے سیکریٹری دفاع کو جواب جمع کرانے کی آخری مہلت دیتے ہوئے جواب جمع نہ کرانے پر سخت احکا ما ت بھی جاری کرسکتے ہیں،عدالت نے سیکرٹری دفاع سے 22 جنوری تک جواب طلب کرتے ہوئے درخواست کی مزید سماعت ملتوی کردی ۔ وا ضح رہے درخواست عزیر بلوچ کی والدہ نے سندھ ہائیکورٹ میں دائر کی ہے۔درخواست میں موقف اپنایا گیا ہے جنوری 2016 میں عزیر بلوچ کی گرفتاری ظاہر کی گئی،ملزم کو 12 اپریل 2017کے بعد عدالت میں پیش نہیں کیا گیا ،عزیر بلوچ کوعدالت میں پیش کرنے کا حکم دیا جائے۔

سندھ ہائیکورٹ

مزید : ملتان صفحہ آخر