شجر کاری،تعلیم اور روزگار شعبوں میں کارگردگی کو بڑھایا جائے گا

شجر کاری،تعلیم اور روزگار شعبوں میں کارگردگی کو بڑھایا جائے گا

کراچی(پ ر) نئے سال میں سی ایس آر کلب کا رپوریٹ سیکڑ، این جی اوز، صنعتی ایسوسی ایشن و اداروں کیساتھ شجر کاری، صحت، تعلیم اور روزگار اور نو جوانوں کی تربیت کیلئے ایک مربوط پلان کے تحت کام کریگا جس سے ماحولیات اور صحت عامہ کی بہتری، تعلیم کے فروغ، روزگار کے مواقع اور تکنیکی تربیت کے ذریعے نوجوانوں کیلئے روزگار کے مواقع پیدا کئے جائیں گے یہ بات مختلف اداروں کے نمائیندوں نے گذشتہ روز کارپوریٹ سوشل ریسپانسبلیٹی کلب کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔اجلا س کی صدارت معروف سماجی رہنما اور سابق صوبائی وزیر ماحولیات جمیل یوسف نے کی۔اجلاس میں اینگرو فانڈیشن کے سربراہ فواد سومرو، ایس ایس جی سی کے جی ایم کارپوریٹ و سی ایس آر شہباز اسلام، فرینڈز آف برنس سینٹر کے عبداللہ فروز، سی ایس آر کلب کے صدر انیس یونس، چیئرمین نعیم قریشی، سیکریڑی جنرل رقیہ نعیم، انجنیئر ندیم اشرف، ایف ایف سی انرجی کے گوند رام، آئی بی اے کے محمد زوہیب، ماہر ماحولیات رفیع الحق، انڈس ہسپتال کی انعم اکرم، انڈس ارتھ کی ملیحہ خان، اور نیشنل فورم فار انوائرنمنٹ اینڈ ہیلھ کی شازیہ عالم، یوگی وجاہت اور دیگر نے شرکت کی۔اجلا س میں سی ایس آر کلب کی گذشتہ سال کی کارگردگی کے حوالے سے نعیم قریشی نے بتایا کہ تھر فانڈیشن، اینگر و کول مائینگ اور سیلانی ویلفیر ٹرسٹ کے ساتھ باہمی اشتراک سے تھر کے نوجوانوں کو انفارمیشن ٹیکنالوجی اور موبائل ریپیرنگ کی تربیت دی جارہی ہے اور جلد ہی تھر میں مدرسہ اور اسکول بھی سیلانی ویلفیئر ٹرسٹ قائم کریگی۔اسکے علاوہ بلدیہ وسطی، جناح ہسپتال، بن قاسم میں سی ایس آر کلب کے تعاون سے 12ہزار سے زائد پودے لگائے گئے اور مختلف اداروں اور این جی اوز کو فراہم کئے گئے۔اس موقع پر جمیل یوسف نے سی ایس آر کلب کی کارگردگی کو سراہا اور کہا کہ اجتماعی سطح پر یہ سرگرمیاں قابل تعریف ہیں اور کراچی میں ماحول کی بہتری کیلئے اقدامات اور شجر کاری کی ضرورت ہے۔انیس یونس نے اس موقع پر تمام اداروں کے نمائیندوں کو اپنی کارگردگی سے آگاہ کیا اور باہمی اشتراک پر زرو دیا اور تمام شرکاء کا شکریہ ادا کیا۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر