دنیاچاندپرچلی گئی، ہم ریکارڈکمپیوٹرائزڈ نہیں کر سکے،،چیف جسٹس ،پٹواریوں کے زمین کے انتقال پر پابندی عائد

دنیاچاندپرچلی گئی، ہم ریکارڈکمپیوٹرائزڈ نہیں کر سکے،،چیف جسٹس ،پٹواریوں کے ...
دنیاچاندپرچلی گئی، ہم ریکارڈکمپیوٹرائزڈ نہیں کر سکے،،چیف جسٹس ،پٹواریوں کے زمین کے انتقال پر پابندی عائد

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ آف پاکستان نے شہری علاقوں میں زمین کے انتقال پر پٹوار خانوں کے کردار پابندی عائد کردی،عدالت نے حکم دیا ہے کہ پٹوار خانے کا کام صرف ریکارڈ رکھنے تک محدودہوگا،عدالت نے زمینوں کے زبانی کے زبانی انتقال پر بھی پابندی عائد کردی عدالت نے حکم دیا ہے کہ زمین کا انتقال ٹرانسفر آف لینڈایکٹ اور رجسٹریشن ایکٹ کے تحت ہو گا۔

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں بنچ نے شہری علاقوں میں پٹواریوں، قانون گواورتحصیل داروں سے متعلق کیس کی سماعت کی،سپریم کورٹ نے پٹواریوں کے زمین کے انتقال پرپابندی لگادی ،چیف جسٹس پاکستان نے ریمارکس دیئے ہیں کہ جہاں لینڈریونیوکا تخمینہ نہیں وہاں پٹوارخانے کیسے کھلے ہیں؟اس حوالے سے میراہی فیصلہ ہے،پٹوارخانے بند کردیئے،چیف جسٹس نے کہا کہ حکومت کو ایک دھیلا بھی نہیں ملے گا۔

ریونیو حکام نے کہا کہ خسرہ نمبر سے زمین منتقل ہوتی ہے،جسٹس اعجاز الاحسن نے استفسار کیا کہ ریکارڈ کہاں سے آجاتا ہے؟چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ پٹوار خانوں نے لٹ مچائی ہوئی ہے،سرکاری وکیل نے کہا کہ کے پی میں لینڈ ریونیو ایکٹ کا اطلاق نہیں ہوتا، چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ تمام زمینوں کی خریدوفروخت رجسٹرڈسیل ڈیڈ سے ہوگی،وکیل پنجاب حکومت نے کہا کہ دیہی علاقوں میں زمین کی فروخت زبانی ہوتی ہے،چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ شاید آج ہم زمین کی زبانی فروخت بند کردیں، دنیاچاندپرچلی گئی، ریکارڈکمپیوٹرائزڈ کیوں نہیں ہوسکتا؟۔

سپریم کورٹ نے پٹواریوں کے زمین کے انتقال پرپابندی لگادی ،عدالت نے حکم دیا ہے کہ کوئی خریدو فروخت زبانی نہیں ہوگی،پٹوارخانوں کی ضرورت نہیں ،رجسٹریشن کے ذریعے زمین منتقل ہوگی،عدالت نے کہا کہ پٹوارخانے،ریونیوریکارڈ کے دیگردفاترزمین کی ٹرانسفر نہیں کرسکیں گے،چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ دیکھتے ہیں اس کے کیا نتائج سامنے آتے ہیں۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /اسلام آباد