ظلم کی رات چھٹنے والی، 2020تبدیلی و انتخابات کا سال،احسن اقبال

       ظلم کی رات چھٹنے والی، 2020تبدیلی و انتخابات کا سال،احسن اقبال

  



 اسلام آباد(آئی این پی) رہنما ء مسلم لیگ ن احسن اقبال نے کہا ہے ظلم کی رات چھٹنے والی، 2020تبدیلی اور انتخابات کا سال ہے،نیب کے نئے قانون کے تحت کوئی سہولت نہیں چاہیے، سی پیک پر 100میل فی گھنٹہ سے کام ہو رہا تھا آج رفتار 10فیصد ہے،و زراء ایسے بیانات سے پرہیز کریں جن سے سی پیک متنازع ہو۔جمعرات کو اپنے بیان میں رہنما مسلم لیگ ن احسن اقبال نے کہا مسلم لیگ (ن) سے جو ناانصافی ہو رہی ہے دراصل وہ تاریخ لکھی جا رہی ہے، قوم پی ٹی آئی اور(ن) لیگ کے کردار سے بخوبی واقف ہے۔ انہو ں نے کہا گولی لگنے سے کئی پلیٹیں ڈالی گئی تھیں یہاں تک کہ سرجری سے زخم بہتر ہوئے، جسم میں موجود گولی یاد دلاتی رہے گی ظلم کیخلاف لڑنا ہے۔ نیب تحقیقات کرے کک بیکس، خور دبرد اور کمیشن ثابت نہیں کر سکتا، نیب کو چیلنج ہے، 93سے اب تک اثاثوں میں کمی ہوئی جبکہ اضافہ نہیں ہوا۔ سی پیک پر 100میل فی گھنٹہ سے کام ہو رہا تھا آج رفتار 10فیصد ہے، وزراء ایسے بیانات سے پرہیز کریں جن سے سی پیک متنازع ہو۔  نیب راولپنڈی پاکستان مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنما اور سابق وزیرداخلہ احسن اقبال کو لے کر واپس راولپنڈی روانہ ہوگیا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ (ن) لیگی رہنما احسن اقبال کو گزشتہ منگل کی شام راولپنڈی سے لاہور لایا گیا تھا جہاں ان کو سروسز ہسپتال میں علاج کے لئے داخل کروایا گیا تھا۔ یہ بھی بتایا گیا ہے کہ ڈاکٹروں نے احسن اقبال کے بازوں کے ٹانکے کھول دئیے ہیں اور احسن اقبال کو ڈسچارج کردیا ہے جس کے بعد نیب کی ٹیم احسن اقبال کو لے کر واپس راولپنڈی روانہ ہوگئی ہے۔  

احسن اقبال

  

مزید : صفحہ آخر