مشرقِ وسطیٰ میں کشیدگی، امریکی وزیرخارجہ نے دورہ ملتوی کر دیا

  مشرقِ وسطیٰ میں کشیدگی، امریکی وزیرخارجہ نے دورہ ملتوی کر دیا

  



واشنگٹن(این این آئی)عراق کے دارالحکومت بغداد میں امریکی سفارت خانے پر حملے کے بعد امریکہ کے وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے خطے میں امریکہ کے حلیف ممالک سے رابطے کیے ہیں۔ مائیک پومپیو نے یوکرین سمیت مختلف ممالک کے دورے بھی ملتوی کر دئیے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق مائیک پومپیو نے اسرائیل اور عراق کے وزرائے اعظم اور قطر کے ڈپٹی وزیر اعظم سے ٹیلی فون پر رابطہ کیا ہے۔ جس میں خطے کی تازہ ترین صورتِ حال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔مائیک پومپیو نے اپنی مرحلہ وار ٹوئٹس میں بتایا کہ عراق میں امریکی سیکیورٹی اہلکاروں اور تنصیبات کے تحفظ کو یقینی بنایا جائے گا۔مائیک پومپیو نے اپنی ٹوئٹ میں بتایا کہ عراقی وزیر اعظم عادل عبدالمہدی نے انہیں یقین دلایا ہے کہ عراق میں امریکی تنصیبات کا تحفظ کیا جائے گا۔پومپیو نے کہا کہ عراقی وزیر اعظم نے کہا ہے کہ ایران نواز ملیشیا کو امریکی سفارت خانے سے دور رکھنے کے لیے ہر ممکن اقدامات کیے جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ ہم ایران اور اس کے سہولت کاروں کا محاسبہ کرنے کے لیے باہمی تعاون جاری رکھیں گے۔امریکی وزیر خارجہ نے اسرائیل کے وزیر اعظم بنیا مین نتین یاہو سے بھی ٹیلی فون پر رابطہ کیا۔ پومپیو نے اپنی ٹوئٹ میں کہا کہ نیتن یاہو نے ایران کے مذموم عزائم کے خلاف اپنے پختہ عزم کا اظہار کیا ہے۔مائیک پومپیو نے بتایا کہ انہوں نے قطر کے نائب وزیر اعظم اور وزیر خارجہ شیخ محمد بن عبدالرحمان آل ثانی سے بھی فون پر بات کی ہے۔

مزید : علاقائی