غیر ملکی سرمایہ کاری پر 600ملین ڈالر منافع بیرون ملک منتقل

غیر ملکی سرمایہ کاری پر 600ملین ڈالر منافع بیرون ملک منتقل

  



کراچی (اکنامک رپورٹر)  پاکستان میں کی جانے والی براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری (ایف ڈی آئی) پر رواں مالی سال کے دوران حاصل ہونے والے600 ملین ڈالر کے منافع جات کی بیرون ملک منتقل کی گئی ہے۔ سٹیٹ بینک آف پاکستان (ایس بی پی) کے اعدادوشمار کے مطابق جاری مالی سال کے ابتدائی پانچ ماہ میں جولائی تا نومبر 2019ء کے دوران غیر ملکی سرمایہ کاروں نے ایف ڈی آئی سے حاصل ہونے والے 600 ملین ڈالر کے منافع جات کی اپنے اپنے ممالک کو منتقلی کی ہے جبکہ گزشتہ مالی سال میں جولائی تا نومبر 2018ء کے عرصہ میں 562 ملین روپے کے منافع جات کی منتقلی کی گئی تھی۔رپورٹ کے مطابق گزشتہ مالی سال کے مقابلہ میں رواں مالی سال کے دوران پورٹ فولیو انویسٹمنٹ سے حاصل منافع جات کی منتقل 70 ملین ڈالر رہی ہے جبکہ گزشتہ مالی سال کے ابتدائی پانچ مہینوں کے دوران 106 ملین ڈالر منتقل کئے گئے تھے۔ایس بی پی کے مطابق رواں مالی سال میں مینو فیکچرنگ کے شعبہ نے سب سے زیادہ 204 ملین ڈالر کے منافع جات منتقل کئے ہیں جبکہ گزشتہ مالی سال کے پانچ ماہ میں 233ملین ڈالر کے منافع جات کی بیرون ملک منتقلی کی گئی تھی۔ اسی طرح ٹرانسپورٹ کے شعبہ سے 65 ملین ڈالر اور سٹوریج سیکٹر سے 94 ملین ڈالر کی منتقلی کی گئی ہے۔ کان کنی کے شعبہ میں 101 ملین ڈالر کی منتقلی کی گئی ہے۔ اقتصادی ماہرین نے کہا کہ منافع جات کی منتقلی میں اضافہ سے ملک میں کاروباری و اقتصادی سرگرمیوں کی بڑھوتری کی عکاسی ہوتی ہے۔

مزید : کامرس


loading...