حکومت بات سے نہیں‘ اقدامات  سے چلتی ہے‘ ذیشان اختر 

حکومت بات سے نہیں‘ اقدامات  سے چلتی ہے‘ ذیشان اختر 

  



بہاولپور(ڈسٹرکٹ رپورٹر)نائب امیرصوبہ جماعت اسلامی جنوبی پنجاب سید ذیشان اختر نے کہاہے کہ حکومت خطابات سے نہیں، اقدامات سے چلتی ہے۔ دعوؤں کے باوجود حکومت (بقیہ نمبر18صفحہ12پر)

معیشت کو ٹھیک نہیں کر سکی۔ جو احتساب ہورہاہے، عام شہری اس کو شفاف نہیں سمجھتے۔ نیب لوگوں کو پہلے بدنام اور ذلیل اور بعدمیں تحقیقات کرتاہے۔ معاشی، تعلیمی، داخلہ اور خارجہ پالیسیاں بیرونی طاقتوں کے تابع بنادی گئی ہیں۔ ہمارے فیصلے اسلام آباد میں نہیں،واشنگٹن میں ہورہے ہیں۔ملک میں جاری 27 قسم کے نظام تعلیم قوم کو تقسیم کر رہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ آئی ایم ایف او ورلڈ بنک نے ملک کا معاشی نظام اپنے قبضہ میں لے لیاہے۔ گورنر سٹیٹ بنک اور ایف بی آر کے چیئرمین سمیت اعلیٰ مناصب پر آئی ایم ایف اور نیشنل سیکورٹی کونسل میں امریکہ کے ملازم کو بٹھا دیا گیاہے۔ انہوں نے کہاکہ 74 ء سے پہلے قوم برطانیہ کی غلام تھی اور اب حکمرانوں نے اسے امریکی غلامی میں دیدیا۔ انہوں نے کہاکہ درجنوں قسم کے نصاب اور نظام تعلیم نے قومی وحدت اور یکجہتی کا شیرازہ بکھیر دیاہے۔ قوم کو دوبارہ منظم کرنے اور اتحاد کی لڑی میں پرونے کیلئے ضروری ہے کہ ملک میں یکساں نصاب اور نظام تعلیم رائج کیا جائے۔

ذیشان اختر 

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...