نااہل حکمرانوں کی وجہ سے پاکستان دنیا میں تنہا ہوچکا، مولانا عطاء الر حمان

نااہل حکمرانوں کی وجہ سے پاکستان دنیا میں تنہا ہوچکا، مولانا عطاء الر حمان

  



چارسدہ (بیورورپورٹ) جمعیت علماء اسلام کے صوبائی امیر سنیٹر مولانا عطاء الرحمان نے کہا ہے کہ کپتان کی غلط پالیسیوں کی وجہ سے آج دنیا میں پاکستان تنہا ہو چکا ہے۔ نیب قانون میں صدارتی آرڈیننس کے زریعے ترمیم کرکے کپتان اپنے ساتھیو ں کو بچانا چاہتے ہیں۔ مقبوضہ کشمیر میں ظلم و بربریت اور متنازعہ شہریت قانون پرعمران خان مگر مچھ کی آنسو بہارہے ہیں۔وہ چارسدہ میں اے این پی کے سابق ضلعی جنرل سیکرٹری و صوبائی اسمبلی کے امیدوار محمد احمد خان کی رہائش گاہ پر شمولیتی جلسے سے خطاب کر رہے تھے۔ اس موقع پر سابق وفاقی وزیر مولانا امیر زمان،سابق ایم این اے مولانا غلام محمد صادق اور ضلعی امیر و سابق ایم این اے مولانا سید گوہر شاہ نے بھی خطاب کیا۔ مولانا عطاء الرحمان اور وفد کی دیگر اراکین نے محمد احمد خان کو جے یو آئی میں باضابطہ شمولیت کی دعوت دی جس کو قبول کرتے ہوئے محمد احمد خان نے خاندان اور ساتھیوں سمیت جے یو آئی میں باقاعدہ شمولیت کا اعلا ن کیا۔محمد احمد خان نے اعلان کیا کہ چارسدہ میں عنقریب ایک تاریخی جلسہ عام کا انعقاد کیا جائے گا جس سے مولانا فضل الرحمان خطاب کریں گے۔ شمولیتی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے سنیٹر مولانا عطاء الرحمان نے کہا کہ کپتان کی مسلسل یو ٹرن کی وجہ سے عالمی دنیا کا پاکستان پر اعتما د ختم ہو چکا ہے۔پاکستان مسلم امہ سمیت عالمی برادری میں تنہائی کا شکار ہو چکا ہے۔آج کشمیر ایشو سمیت بھارت میں شہریت کے متنازعہ قانون پر پاکستان کا کوئی ساتھ نہیں دے رہا۔مودی کے خلاف کپتان صرف بڑھکیں مار رہا ہے۔ موجودہ حکومت تاریخ کی ناکام ترین حکومت ہے جس کے تمام انتخابی دعوے اور وعدے جھوٹ کا پلندہ ثابت ہورہے ہیں۔نا اہل کپتان پارلیمنٹ کے ہوتے ہوئے ملک کو صدارتی آرڈیننس کے زریعے چلاکر جمہوریت کو نقصان پہنچا یا جا رہا ہے۔نیب قانون میں صدارتی آرڈیننس کے زریعے ترمیم کرکے جہانگیر ترین سمیت کپتان اپنے چہیتوں، بی آر ٹی،ملم جبہ اور بلین ٹری سونامی میں اربوں روپے کرپشن پر پردہ ڈال رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ کپتان پارلیمنٹ کو بے توقیر کر رہے ہیں۔بجلی،گیس لوڈشیڈنگ اور مہنگائی کی وجہ سے متوسط طبقے کی زندگی اجیرن بن چکی ہے ۔ فاٹا انضمام کے ساتھ ساتھ وہا ں کے عوام کے مسائل حل کرنے کے لیے کپتان نے بڑے بڑے پیکج کا اعلان کر دیا مگر آج تک ایک دھیلہ نہیں ملا۔ خیبر پختونخواہ کو بجلی کی خالص منافع کی ادائیگی میں روڑے اٹکائے جا رہے ہیں مگر صوبائی حکومت اور پی ٹی آئی کے ارکان پارلیمنٹ اس پر خاموش ہے۔ این ایف سی ایوارڈ میں فاٹا کو خصوصی پیکج دینے کا وعدہ کیا گیا مگر آج تک این ایف سی ایوارڈ کا کوئی نتیجہ خیز اجلاس تک نہ ہو سکا۔ انہوں نے کہا کہ عوام کی نظریں مولانا فضل الرحمان پر ہے اور انشاء اللہ بہت جلد پاکستان میں از سرنو انتخابات کا انعقاد کر کے اقتدار حقیقی نمائندوں کے حوالے کیا جائے گا۔مولانا عطاء الرحمان نے کہا کہ موجودہ فسطائی حکومت کے خلاف جدوجہد جاری رکھی جائے گی اور بہت جلد کپتان کی مسلط کردہ حکومت سے عوام کو نجات دلائے جائے گی۔مولاناعطاء الرحمان نے کہا کہ کپتان کی کابینہ میں شامل وزراء اور مشیر عالمی ایجنڈے پر کام کر رہے ہیں۔ائی ایم ایف اور ورلڈ بینک کے ملازمین کو قومی خزانہ حوالہ کیا گیا ہے جوعوام بھاری بھرکم ٹیکس لگا کر ریاست سے متنفر کررہے ہیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر