گرفتار ملزمان کے غیر قانونی اثاثے منجمد کرنے کیلئے درخواست دائر

  گرفتار ملزمان کے غیر قانونی اثاثے منجمد کرنے کیلئے درخواست دائر

  



پشاور(نیوزرپورٹر)قومی احتساب بیورو نے غیر قانونی اثاثے بنانے کے الزام میں گرفتار سرکاری افسرمحمد طار ق اور اُسکے بے نامی دار بھائی محمد الیاس ساکنان کوچی آباد تیرائی پایاں ورسک روڈ کے اثاثے منجمد کرنے کے لیے احتساب عدالت میں درخواست دائر کردی ہے جس پر احتساب عدالت کے جج اشتیاق احمد نے ملزمان کو ضمیمہ ب پر جیل سے طلب کرلیاہے جس کی سماعت آج دوبارہ ہوگی، تفصیلات کے مطابق نیب نے غیر قانونی اثاثے بنانے کے الزام میں گرفتار ملزمان محمد طارق اورمحمد الیاس کی منقولہ جائیداد منجمد کرنے کے لیے احتساب عدالت میں درخواست دائر کی ہے درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ ملزم محمد طارق نے اپنی آمدن سے زائد اپنے نام اور بینامی دار بھائی محمد الیاس کے نام اسلام آباد میں دو گھر اور پشاور میں موضع سواتی میں تین مقامات پر 20مرلے کے تین پلاٹس، موضع پلوسی دارمنگی میں سا ت مرلے پلاٹ اور حیات آباد کے فیز فور اور فیز تھری میں دو پلاٹس شامل ہیں جسکو نیب نے گزشتہ ماہ 24دسمبر کو نیب نے منجمد کرنے کے احکامات جاری کئے تھے لہذا عدالت نیب کے احکامات کی توثیق کرے، عدالت نے نوٹس جاری کرکے ملزمان کو جیل سے طلب کرلیااور درخواست پر سماعت آج دوبارہ کرنے کے احکامات جاری کردیئے ہیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر