”امریکہ کومزانہ چکھایا گیا تو پھر ۔۔۔“سینئر ایرانی صحافی بھی میدان میں آگئی

”امریکہ کومزانہ چکھایا گیا تو پھر ۔۔۔“سینئر ایرانی صحافی بھی میدان میں آگئی
”امریکہ کومزانہ چکھایا گیا تو پھر ۔۔۔“سینئر ایرانی صحافی بھی میدان میں آگئی

  



تہران (ڈیلی پاکستان آن لائن)ایران کی سینئر صحافی زہرہ زیدی نے کہاہے کہ امریکہ کے مفادات ایران کے بہت نزدیک ہیں، اگر انسانی حقوق کے نام ونہاد علمبردارکومزا نہ چکھایاگیا تو پھر اس کے حوصلے بڑھتے جائیں گے ۔

دنیا نیوز کے پروگرام ”دنیا کامران خان کے ساتھ“میں گفتگو کرتے ہوئے زہرہ زیدی نے کہا کہ امریکہ ایران سے بہت دور ہیں لیکن اس کے مفادات تو ایران کے بہت نزدیک ہیں جہاں پر امریکہ کونقصان پہنچایا جاسکتاہے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر ان نام و نہاد انسانی حقوق کے ٹھیکیداروں کو مزا نہ چکھایا گیا تو پھر ان کے حوصلے بڑھتے جائیں گے جس طرح قاسم سلیمانی کو شہید کیا گیا ہے ۔

واضح رہے کہ دارالحکومت بغداد کے ایئرپورٹ پرامریکہ کی جانب سے راکٹ حملے کیے گئے، جس کے نتیجے میں ایرانی جنرل قاسم سلیمانی سمیت 8 افراد جاں بحق ہوگئے۔ راکٹ حملے میں ایرانی حمایت یافتہ ملیشیا پاپولرموبلائزیشن فورس (پی ایم ایف) کے ڈپٹی کمانڈرابومہدی المہندس بھی جاں بحق ہوگئے۔عراقی حکام کے مطابق بغداد ایئرپورٹ پرداغے گئے 3 راکٹ کارگوہال کے قریب گرے، راکٹ حملے سے 2 کاروں کوآگ بھی لگی۔عرب ٹی وی کے مطابق راکٹوں سے اہم مہمانوں کوایئرپورٹ لانے والی گاڑیاں تباہ ہوئیں، راکٹ حملے سے قبل سائرن بجے، فضا میں ہیلی کاپٹراڑتے دیکھے گئے۔

پینٹاگون کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ جنرل قاسم سلیمانی کوڈونلڈ ٹرمپ کی ہدایت پرمستقبل میں ایران کی جانب سے حملوں کو روکنے کے لیے ہلاک کیا گیا ہے۔

مزید : بین الاقوامی