شام سے لبنان جانے والے فلسطینی پناہ گزینوں کو نہ روکا جائے، ایمنسٹی انٹرنیشنل

شام سے لبنان جانے والے فلسطینی پناہ گزینوں کو نہ روکا جائے، ایمنسٹی ...

  

دمشق(این این آئی) شام میں جاری خانہ جنگی سے اپنی جانیں بچا کر لبنان جانے والے فلسطینی پناہ گزینوں کی لبنان میں داخلے پر رکاوٹیں ڈالنے پر انسانی حقوق سے متعلق عالمی ادارے ایمنسٹی انٹرنیشنل نے بیروت حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔ لندن میں قائم ایمنسٹی انٹرنیشنل نے اپنی ایک تازہ رپورٹ میں لکھا ہے کہ شام سے نقل مکانی کرنے والے فلسطینی پناہ گزینوں، جن میں حاملہ عورتیں اور بچے بھی شامل ہیں، کو لبنانی سرحد پر زیادہ سخت پابندیوں کے سبب لبنان میں داخلے سے روکا جا رہا ہے۔ اس بارے میں بات کرتے ہوئے ایمنسٹی انٹرنیشنل کے پناہ گزینوں اور مہاجرین کے حقوق کے سربراہ شریف السید علی کا کہنا تھاکہ کسی بھی ایسے فرد کا، جو پناہ کی تلاش میں کسی مسلح تنازعے والے علاقے سے نقل مکانی کر رہا ہو، داخلہ ہر گز نہیں روکا جانا چاہیے۔ ایسا کر کے لبنان اپنی بین الاقوامی ذمہ داریوں کو نظر انداز کر رہا ہے۔رپورٹس کے مطابق اگرچہ لبنانی حکومت کا موقف ہے کہ فلسطینی پناہ گزینوں کو لبنان سے باہر رکھنے کے حوالے سے تاحال کوئی فیصلہ نہیں کیا گیا ہے -

تاہم ایمنسٹی کی رپورٹ اس حوالے سے پالیسی کی نشاندہی کرتی ہے۔ رپورٹ کے مطابق مبینہ طور پر لبنانی سکیورٹی فورسز کی ایک دستاویز کے مطابق ایئر لائنز کو یہ احکامات جاری کیے جا چکے ہیں کہ شام سے کسی بھی فلسطینی مسافر کو لبنان نہ لایا جائے، خواہ اس کے پاس کوئی بھی دستاویز ہو۔ رپورٹ میں مزید درج ہے کہ شام سے لبنان کا رخ کرنے والے فلسطینی پناہ گزینوں کو لبنان میں عارضی رہائش کی اجازت حاصل کرنے کے لیے انتہائی مشکل شرائط پوری کرنا ہوتی ہیں۔ یہ امر اہم ہے کہ قریب ایک ملین شامی پناہ گزین اس وقت لبنان میں پناہ لیے ہوئے ہیں۔ ان میں سے باون ہزار فلسطینی ہیں۔ شام سے لبنان کا رخ کرنے والے زیادہ تر فلسطینیوں کا تعلق دمشق کے جنوب میں واقع یرموک کیمپ سے ہے۔ پناہ گزینوں کا یہ کیمپ گزشتہ برس سے شامی فوج کے محاصرے میں ہے اور وہاں موجود پناہ گزیوں کو انتہائی محدود مقدار میں کھانے پینے اور دیگر استعمال کی اشیا فراہم ہوتی ہیں۔ ایمنسٹی انٹرنیشنل نے بیروت حکومت پر زور دیا ہے کہ شام سے آنے والے فلسطینی پناہ گزینوں کے خلاف امتیازی سلوک فوری طور پر ختم کر دی جائیں۔ رپورٹ میں متنبہ کیا گیا ہے کہ اضافی عالمی تعاون کے بغیر شام سے لبنان جانے والے پناہ گزینوں کے خلاف پابندیوں میں مزید اضافہ ممکن ہے۔

مزید :

عالمی منظر -