توانائی بحران کے خاتمے کیلئے ہائبرڈ ٹیکنالوجی کو فروغ دینا ہو گا،ناصر حمید

توانائی بحران کے خاتمے کیلئے ہائبرڈ ٹیکنالوجی کو فروغ دینا ہو گا،ناصر حمید

  

 لاہور(جنرل رپورٹر)ممبر لاہور چیمبرز آف کامر س اینڈ انڈسٹری و پاکستان آٹو موبائل سپیئرپارٹس امپورٹرز اینڈ ڈیلرز ایسوسی ایشن(پاسپیڈا) کی سینٹر ل ایگزیکٹو کمیٹی کے ممبر ناصر حمیدخاں چیئرمین اینٹی سمگلنگ کمیٹی لاہور چیمبر نے چائنہ کے ایک وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہائبرڈ ٹیکنالوجی کے ملک میں فروغ اور سرمایہ کاری سے توانائی کے بحران پر قابو پایا جاسکتا ہے انہوں نے کہا کہ ملکی معیشت کو مستحکم اور توانائی بحران کے خاتمہ کیلئے ہائبرڈ کٹ کو کسٹمز ڈیوٹی سے مستثنیٰ قرار دیا جائے تاکہ توانائی بحران جو اس وقت ملک کی معاشی اور معاشرتی سرگرمیوں کو متاثر کر رہا ہے اس کے خاتمہ میں مدد مل سکے ناصر حمید نے کہا کہ چائنہ وفد کو پاکستان میں موجود گاڑیوں کو ہائبرڈ ٹیکنالوجی میں تبدیل کرنے کی پیشکش کی کہ وہ سی این جی کٹ کے متبادل ہائبرڈ کٹ متعارف کروائیں اس سے نئی ہائبرڈ گاڑوں کی غیر ممالک سے کی جانے والی امپورٹ کو روکا جاسکے گا اور زرمبادلہ کے بہاﺅ کو روک کر ملکی معیشت کو مستحکم کیا جاسکے گا انہوں نے چائنہ کے وفد کی اس پیشکش کو قبول کرتے ہوئے اس سوچ کو عملی جامعہ پہنانے کے لیے اگلے ماہ تک چند گاڑیوں کو ہابرڈ کٹ لگا کر تجرباتی روڈ ٹیسٹ کرنے کا وعدہ کیا ٹرانسپورٹ کی توانائی کھپت کو اگر ہائبرڈ ٹیکنالوجی سے پورا کیا جائے تو ملکی صنعتوں کو گیس کی مکمل فراہمی کرنے سے بے روزگاری، غربت اور مہنگائی سمیت دیگر معاشرتی برائیوں کا سدباب ہوسکے گا اس سے ملک میں ترقی کا پہیہ رواں دواں رہے گاانہوں نے حکومت سے اپیل کی کہ وہ ہائبرڈ کٹ کی امپورٹ کو کسٹمز ڈیوٹی سے مستثنیٰ قرار دے تاکہ اس ٹیکنالوجی کو وسیع طریقہ سے فروغ دیا جاسکے اور ٹرانسپورٹ شعبہ میں توانائی بحران کا خاتمہ ہوگا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -