آئی ڈی پیز کیلئے تین مقامات پر رجسٹریشن سینٹر قائم ، ملتان سے امدادی کھیپ روانہ کر دی گئی

آئی ڈی پیز کیلئے تین مقامات پر رجسٹریشن سینٹر قائم ، ملتان سے امدادی کھیپ ...
آئی ڈی پیز کیلئے تین مقامات پر رجسٹریشن سینٹر قائم ، ملتان سے امدادی کھیپ روانہ کر دی گئی

  

بنوں (مانیٹرنگ ڈیسک )شمالی وزیرستان سے آنے والے متاثرین کی مشکلات کے پیش نظر بنوں میں مزید تین رجسٹریشن ڈیسک قائم کر دئیے گئے ہیں ، آئی ڈی پیز کی امداد کیلئے پاک فوج کی ملتان سے امداد کی پہلی کھیپ روانہ کر دی گئی۔تفصیلات کے مطا بق شمالی وزیرستان کے مختلف علاقوں سے بنوں پہنچنے والے ہزاروں افراد کئی روز گزرنے کے باوجود رجسٹریشن سے محروم ہیں جس کی وجہ سے وہ حکومتی امداد اور سہولیات سے محروم ہیں، متاثرین کی مشکلات کو دیکھتے ہوئے رجسٹریشن کا عمل تیز کرنے کیلئے بنوں میں تین مختلف مقامات پر رجسٹریشن ڈیسک قائم کر دئیے گئے ہیں۔ میر علی سے آنے والے متاثرین کیلئے گورنمنٹ کامرس کالج بنوں ، میران شاہ کے متاثرین کے لئے بنوں شوگر ملز اور رزمک کے آئی ڈی پیز گورنمنٹ ہائی سکول نمبر4 بنوں میں رجسٹریشن کرا سکیں گے، ہر رجسٹریشن سینٹر میں دس کاﺅنٹرز بنائے گئے ہیں۔ انتظامیہ کا کہنا ہے کہ ان کی تعداد میں اضافہ کیا جا رہا ہے، ہاتھ سے لکھے گئے ڈیٹا کو بعد میں نادرا کے ڈیٹا بیس میں رجسٹر کیا جاتا ہے۔ انتظامیہ کے مطابق آئی ڈی پیز کی تعداد بہت زیادہ ہے تاہم حتمی طور پر تعداد کے بارے میں کچھ کہنا ممکن نہیں ہے ۔ دوسری طرف متاثرین کیلئے ملتان سے گیارہ ٹرکوں پر امدادی سامان روانہ کر دیا گیا ہے۔ پاک فوج کی جانب سے بھیجے گئے ان ٹرکوں پر 90 ٹن سامان موجود ہے۔ امداد کی پہلی کھیپ میں آئی ڈی پیز کے لیے کھانے پینے کی اشیاءآٹا ، دالیں ، چاول ، چینی دودھ ،گھی ،آئل کے علاوہ برتن ، چارپائیاں ، ادویات اور ضروریات زندگی کی دیگر اشیاءروانہ کی گئیں۔ اس موقع پر کمانڈر لاجسٹک ملتان کور بریگیڈیئر لیاقت علی کا کہنا تھا کہ دہشت گردوں کے خلاف آپریشن کی کامیابی کیلئے گھر بار چھوڑنے والوں کی مدد کرنا فرض ہے۔

مزید :

دفاع وطن -