منوہر پاریکر کے بیان کی مذمت ،کیا فیصلے ایسے ہی ہوتے ہیں؟،عمر عبداللہ

منوہر پاریکر کے بیان کی مذمت ،کیا فیصلے ایسے ہی ہوتے ہیں؟،عمر عبداللہ

سرینگر (اے این این) مقبوضۃ کشمیر کے سابق کٹھ پتلی وزیرِ اعلی عمر عبداللہ نے منوہر پاریکر کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ اگر اس طرح حکومتی فیصلہ سازی ہوتی ہے تو کیا ہمیں خود کو محفوظ تصور کرنا چاہیے۔سماجی رابطوں کی سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ایک پیغام میں عمر عبداللہ نے لکھا ہے کہ سرجیکل سٹرائیک اوڑی حملے کی وجہ سے نہیں بلکہ اس لئے کی گئی کیونکہ ایک وزیر سے کسی نے ہتک آمیز سوال پوچھا تھا۔ انسان اس بارے میں کیا کہے۔

خیال رہے کہ گزشتہ برس ستمبر میں بھارت نے دعوی کیا تھا کہ انہوں نے لائن آف کنٹرول عبور کر کے پاکستان کے زیرِکنٹرول کشمیر میں قائم مبینہ دہشت گردوں کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا ہے۔ جبکہ پاکستان کی جانب سے ایسی کسی بھی کارروائی کی تردید کی گئی تھی۔

مزید : علاقائی