زرداری نے سندھ کو تباہ کر دیا

زرداری نے سندھ کو تباہ کر دیا
 زرداری نے سندھ کو تباہ کر دیا

  

لاڑکانہ(این این آئی) سندھ نیشنل فرنٹ کے چیئرمین سردار ممتاز علی خان بھٹو کے اعزاز میں پارٹی رہنما ہوت خان میرالی کی جانب سے لاڑکانہ شہر کے مقامی میرج ہال میں عید ملن پارٹی دی گئی۔ اس موقع پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ممتاز علی بھٹو نے کہا کہ زرداری اب سندھ کو تباہ کر کے اس کا بچہ کھچہ سانس بھی پینا چاہتے ہیں اور ایسے قدم اٹھا رہے ہیں جن کا انہیں نہ آئینی اور نہ ہی قانونی اختیار ہے۔ سندھ میں نیب کو کارروایوں سے روکنا، یونیورسٹیز کے وائس چانسلرز کے عہدے ختم کرنا، آئی جی پولیس سے ماتحت افسران کی تقرری اور تبادلے کے اختیار چھیننا جاہل اور بدنیت حکمرانوں کا کام ہے۔ نیب مرکزی ادارہ ہے جس کو یہ نہیں روک سکتے اسی طرح یونیورسٹیز اور پولیس میں مداخلت کرنا غیر قانونی اور غیر روایتی کام ہے نہ صرف یہ بلکہ زرداری گوٹھوں میں جاکر بڑی بڑی لباڑیں مار رہا ہے مگر اس کی صدارت کے دوران کوئی نمایاں کام نہیں ہوا حالانکہ اس نے آتے ہی پاکستان کیلئے امداد جمع کرنے کیلئے دورے کیے مگر سب اس کو اچھی طرح جانتے تھے اس لئے ایک پائی بھی اس کو نہ مل سکی اور آخر میں یہ فیصلہ کیا گیا کہ دنیا کے تین ممالک پر مشتمل ایک فورم بنایا جائے گا جس کو پاکستان کی مدد واسطے امداد دی جائے گی اور وہ ہی خرچ کریں گے مگر آگے چل کر اس کمیٹی کو بھی امداد نہیں دی گئی۔ آئندہ ہونے والی الیکشن میں زیپلوں کو کامیاب کرنے کیلئے بدستور جھوٹے وعدے کیے جا رہے ہیں کہ کامیاب ہوکر سندھ کو جنت بنا دیں گے جس پر لوگ یہ سوال کر رہے ہیں کہ زیپلوں کی ماضی میں 13 سالہ حکمرانی میں وہ جنت نہ بن سکی تو آنے والے 5 سالوں میں جنت تو پیدا نہیں ہو سکے گی بلکہ سندھ کی جان میں جو سانس باقی بچہ ہے وہ بھی زیپلے پی لیں گے اور مزید کون سی باتیں کی جائیں، عذاب میں جکڑے ہوئے اور اپنی آنکھوں سے لوٹ مار دیکھنے والے ہوش میں آ رہے ہیں یہ ہی وجہ ہے کہ ناجائز سندھ کے وسائل اور افسر شاہی استعمال کر کے زرداری در در بھٹک رہا ہے۔

ممتاز علی خان بھٹو

مزید : صفحہ اول