ریمنڈ ڈیوس کے انکشافات قوم کی جگ ہنسائی ہو رہی ہے‘ فوزیہ صدیقی

ریمنڈ ڈیوس کے انکشافات قوم کی جگ ہنسائی ہو رہی ہے‘ فوزیہ صدیقی

ملتان (سٹی رپورٹر)ڈاکٹر عافیہ کی ہمشیرہ اور عافیہ موومنٹ کی رہنما ڈاکٹر فوزیہ صدیقی نے کہا ہے کہ ریمنڈڈیوس کی رہائی کے بدلے اگر قوم کی معصوم بیٹی ڈاکٹر عافیہ صدیقی وطن واپس آگئی ہوتی توآج ایک مرتبہ پھر دنیا بھر میں قوم کی جگ ہنسائی نہ ہورہی ہوتی۔ عافیہ موومنٹ میڈیا انفارمیشن(بقیہ نمبر32صفحہ12پر )

سیل سے جاری کردہ بیان میں انہوں نے کہا کہ کئی پاکستانیوں کا قاتل اپنے وطن میں آزاد ہے اور جرم بے گناہی کی پاداش میں قوم کی بیٹی ڈاکٹر عافیہ 14 سال سے قید ناحق میں ہے۔ جنرل (ر) احمد شجاع پاشا نے ریمنڈ ڈیوس کی رہائی کیلئے سودے بازی میں پاکستانیوں کے خون اور قومی غیرت کی حرمت کاپاس نہیں رکھا تھا۔ملک کے چپے چپے کی طرح ایک ایک شہری کا تحفظ بھی ضروری ہے۔2011 ئمیں ریمنڈ ڈیوس کی رہائی کے وقت عافیہ کے معاملے میں خاموشی اختیار کرنے والی سیاسی قیادت بھی پاکستانیوں کے خون اور قومی غیرت کی سودے بازی میں برابر کی شریک ہے۔ ڈاکٹر فوزیہ نے سوال کیا کہ ریمنڈ ڈیوس نے جو کچھ کتاب میں انکشاف کیا ہے اس پر اب شور مچانے والے کیا اس وقت حقائق سے بالکل ہی لاعلم تھے؟ کئی پاکستانیوں کے قاتل ریمنڈ ڈیوس کے بدلے جب قوم کی معصوم بیٹی ڈاکٹر عافیہ کو واپس لانے کا نادر اور سنہری موقع ہاتھ آیا تھا اس وقت اپوزیشن جماعتیں کیوں خاموش تھیں؟ ۔ڈاکٹر فوزیہ صدیقی نے کہا کہ میں قوم اور بالخصوص نوجوانوں سے اپیل کرتی ہوں کہ ریمنڈڈیوس کی کتاب کو ضرور پڑھیں لیکن اس وقت کے اخبارات کا مطالعہ بھی ضرور کریں جب قومی وقار کے خلاف یہ سودے بازی ہورہی تھی اورقوم کو کتاب پڑھنے کا درس دینے والوں سے یہ سوال بھی ضرور کریں کہ 6 سال بعد انہیں کیوں ہوش آیاہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر