جمشید دستی کی رہائی کیلئے شہر شہر احتجاج، مطاہرے، ریلیاں، دھرنے، گونواز گو کے نعرے

جمشید دستی کی رہائی کیلئے شہر شہر احتجاج، مطاہرے، ریلیاں، دھرنے، گونواز گو ...

مظفر گڑھ، چوک مکول، بارہ میل، عالیوالا، ترنڈہ محمد پناہ(نمائندگان) پاکستان عوامی راج پارٹی کے مرکزی چیئرمین رکن قومی اسمبلی جمشید دستی کی گرفتاری اور مقدمات کے اندراج کیخلاف کئی شہروں میں احتجاجی مظاہرے کیے گئے ریلیاں نکالی گئیں اور دھرنے دیئے گئے احتجاج کے دوران فضا گو نواز گ ، دستی تیرے جانثار بے شمار کے نعروں سے گونجتی رہی اس سلسلہ میں مظفر گڑھ سے نامہ نگار کیمطابق ایگری فورم پاکستان ضلع مظفر گڑھ کے سینئر نائب صدر شیخ (بقیہ نمبر52صفحہ12پر )

عبدالحمید اجمل کی زیر قیادت کسانوں نے جمشید دستی کی رہائی کے لئے زبردست احتجاج کیا۔ریلی سے خطاب کرتے ہوئے شیخ اجمل نے کہا کہ جمشید دستی کا قصور یہ ہے کہ اس نے کسانوں کے لئے نہری پانی کھولا کسان بھائی ان کے ساتھ بھر پور اظہار یکجہتی کرتے ہیں اگر انہیں رہا نہ کیا گیا تو تحریک چلائی جائے گی۔دریں اثنا ء پیغام امن کونسل پنجاب کے چیئرمین عمر فاروق کھوکھر،صدر اصغر ندیم اور سیکرٹری اطلاعات ملک ندیم کھوکھر نے جمشید دستی کی گرفتاری کی مذمت اور ان کی رہائی کا مطالبہ کیا ہے۔ دریں اثناء پاکستان عوامی راج کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات رانا امجد علی امجد ایڈووکیٹ نے کہا ہے کہ پنجاب حکومت نے اگر جمشید دستی کے خلاف مزید جھوٹے نئے مقدمات قائم کرنے کی کوشش کی تو پل چناب سمیت جنوبی پنجاب کی ہر سڑک بند کر دی جائے گی اور احتجاج کا دائرہ بڑھا دیا جائے گا چوک مکول سے نامہ نگار کیمطابق عوامی راج پارٹی کے چیرمین جمشید احمد دستی کی گرفتاری پر پورے ملک کی طرح شہرسلطان میں بھی بھرپور احتجاج کیا گیا اور ریلی کا انعقاد کیا ریلی جتوئی چوک پر جلسہ عام بدل گئی ریلی سے عوامی راج پارٹی کے رھنما رانا خالد محمود ظفر کھٹک رانا دلشاد احمد صفت اللہ خان فیاض آصفی رانا سعید ٹھاکر سہیل اختر غوری تحریک انصاف کے اشفاق نچرانی جماعت اسلامی کے رھنما زاھد خان گوپانگ ایڈووکیٹ نے خطاب کرتے ھوئے کہا کہ حکومت نے جمشید دستی کو کسانوں کا پانی کھولنے کے جھوٹے پرچہ میں گرفتار کر کے کسان دشمنی کا ثبوت دیا ھے انہوں نیکہا سانحہ ماڈل ٹاؤن کے قاتل حکومت کا حصہ ہیں اور پانی چوری کے جرم میں منتخب رکن قومی اسمبلی پابند سلاسل ھے جمشید احمد دستی کو سرائیکی خطہ کی محرومیوں کی آواز بلند کرنے کی سزا دی جاری ھے بارہ میل سے نامہ نگار کیمطابق عوامی راج پارٹی کبیروالا کی جانب سے میاں ضیاء الرحمن کمبوہ اور مہر افتخار احمد سڈھل کی قیادت میں قائد عوامی راج پارٹی اور ممبر قومی اسمبلی جمشید احمد خان دستی کے خلاف جھوٹے مقدمات درج کرنے بلاجواز پابند سلاسل رکھنے کے خلاف اور فی الفور رہائی کے حق میں ایک احتجاجی موٹر سائیکل ریلی نکالی گئی۔کینال روڈ کبیروالا سے شروع ہونیوالی ریلی کبیروالا شہر کے مختلف چوکوں اور بازاروں سے ہوتی ہوئی پریس کلب کبیروالا پر اختتام پذیر ہوئی ۔موٹر سائیکل ریلی کے شرکاء نے پریس کلب کبیروالا کے باہر احتجاجی دھرنا دیا اور گو نواز گو،دستی تیرے جانثار ،بے شمار کے نعرے لگائے اس موقع پر عوامی راج پارٹی کبیروالا نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ جمشید دستی کے خلاف بنائے گئے تمام جھوٹے مقدمات خارج کئے جائیں اور جمشید دستی کو فوراً رہا کیا جائے۔ عالیوالا سے نامہ نگار کیمطابق پاکستان سرائیکی پارٹی و سرائیکستان قومی اتحاد کے زیر اہتمام ایم این اے جمشید دستی کی ناجائز گرفتاری۔ ناجائز مقدمات ان پر جیل میں بے پناہ تشدد، مختلف جیلوں میں منتقلی کے خلاف ایک پر زور احتجاجی مظاہرے کا اہتمام کیا گیا ۔مظاہرے کی قیادت پاکستان سرائیکی پارٹی کے ڈویژنل صدر اللہ وسایا خان لنگاہ سرائیکستان قومی اتحاد کے ضلعی سینئر نائب صدر عبدالغفور خان لغاری نے کی۔ احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے اللہ وسایا خان لنگاہ نے کہا کہ جمشید دستی ظالم حکمرانوں کو آئینہ دکھاتا ہے جس کی وجہ سے حکمرانوں کو اپنا مکروہ چہرہ اور کالے کرتوت نظر آتے ہیں۔ اس وجہ سے حکمران نے پاگل ہو کر جمشید دستی کو پابند سلاسل کرایا ہے۔ شریف برادران سن لیں جمشید دستی کے ساتھ اور ظالمانہ سلوک ان کیلئے طوفان نوح ثابت ہو گا اور یہ اپنا بویا کاٹتے ہوئے اس میں غرق ہو جائیں گے سرائیکستان قومی اتحاد کے ضلعی سینئر نائب صدر عبدالغفور خان لغاری نے مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ظالم حکمران جتنا چاہے ظلم کے پہاڑ توڑ لیں جمشید دستی ان کے خلاف انکے کالے کرتوتوں کی وجہ سے جدوجہد کرتا رہے گا احتجاج کرنے والوں میں سابق ممبر شملہ خان چانڈیہ، ملک محمد شفیع ارائیں، عبدالعزیز خان لغاری، دین محمد لغاری، غلام رسول خان سہرانی، اللہ ڈتہ خان لغاری، قبول خان لغاری، منور خان لغاری، غلام یٰسین ماچھی، محمد عظیم خان چانڈیہ کے علاوہ کثیر تعداد میں لوگ موجود تھے۔ دریں اثناء پاکستان کی جمہوریت کا ایک خوفناک روپ لگتا ہے ۔جمشید دستی کا قصور شاید شریف برادرن کے ماڈل ٹاؤن قتل کیس سے بھی بہت بڑا جرم ہے۔ یہ بات سرائیکی وسیب کے نوجوان قیادت نادر اسلم خان لغاری کی ہدایت پر جمشید احمد دستی کے حق میں نوجوانوں نے احتجاج کیا اور نعرہ بازی کی اور بینرز اُٹھائے ہوئے تھے۔ فوری طور پر جمشید دستی کو باعزت طور پر رہا کیا جائے ہم امید کرتے ہیں اعلیٰ عدلیہ ان کو انصاف فراہم کرے گی ترنڈہ محمد پناہ سے نمائندہ خصوصی کیمطابق پاکستان عوام راج پارٹی کے سربراہ جمشید احمد خان دشتی پر جھوٹے مقدمات سے ان کو ڈرایا نہیں جا سکتا جمشید دشتی کو فوری رہا کیا جائے اور ناروا سلوک پر اعلیٰ تحقیقاتی کمیٹی بنائی جائے جمشید دشتی سرائیکی وسیب کی عوام کے ہیرو ہیں ان خیالات کا اظہار سردار اللہ بخش خان دشتی نے جمشید دشتی کے حق میں احتجاجی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کہا ریلی موضع دشتی سے شروع ہو کر ٹھل حمزہ جن پور روڈ پر بنیادی مرکز صحت دشتی کے قریب جا کر اختتام پزیر ہوئی ریلی کے شرکا نے جمشید دشتی کے حق میں اور حکومت کے خلاف نعرے بازی کی ریلی میں اختر حمید خان ،الطاف حسین خان ،حسنین عباس ،محسن علی خان ،محمد علی خان ،طالب حسین خان نیاز اے دشتی ،جاوید خان ،عاقب خان دشتی ،ندیم عباس ،خلیل خان دشتی ،دیگر نے جمشید دشتی کے حق میں اور حکومت کے خلاف شدیدنعرے بازی کی ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر