اگر انسان کی وفات کے بعد اس کے جسد خاکی کو خلاءمیں چھوڑ دیاجائے تو اگلے چند گھنٹوں میں کیا تبدیلیاں متوقع ہیں؟ وہ بات جو شاید آپ کو معلوم نہیں

اگر انسان کی وفات کے بعد اس کے جسد خاکی کو خلاءمیں چھوڑ دیاجائے تو اگلے چند ...
اگر انسان کی وفات کے بعد اس کے جسد خاکی کو خلاءمیں چھوڑ دیاجائے تو اگلے چند گھنٹوں میں کیا تبدیلیاں متوقع ہیں؟ وہ بات جو شاید آپ کو معلوم نہیں

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) وفات کے بعد اگر کسی شخص کی میت کو دفن کرنے کی بجائے خلاءمیں چھوڑ دیا جائے تو کیا تبدیلی آسکتی ہے ؟ بظاہر اس سوال کو سوچنا بھی پاگل پن لگتا ہے مگر اگر ایسا ہو جائے تو اس کی کمیت صرف 20فیصد رہ جائے گی۔زمین پر زندہ حالت میں دکھائی دینے والا 100 کلوگرام وزنی انسان جب مرنے کے بعد خلا میں پہنچے گا تو کچھ ہی دیر میں وہ صرف 20 کلوگرام وزنی رہ جائے گا۔ وہ ہڈیوں کا ایک ایسا ڈھانچہ بن چکا ہوگا جس پر کھال منڈھی ہوگی۔ یعنی ہم یہ کہہ سکتے ہیں کہ صرف ایک گھنٹے میں وہ شخص ایک ”خشک ممی“ میں تبدیل ہوچکا ہوگا۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ خلا میں ہوا اور نمی نہیں ہوتی۔ یعنی اگر کسی مردہ جسم کو خلا میں چھوڑ دیا جائے تو اس میں موجود نمی بڑی تیزی سے ختم ہو گی۔ چونکہ انسانی جسم کا 80 فیصد حصہ پانی پر مشتمل ہوتا ہے، اس لیے ماہرین کا اندازہ ہے کہ مردہ جسم کے خلا میں چھوڑے جانے کے ایک گھنٹے کے اندر اندر ہی اس کی کمیت صرف 20 فیصد رہ جائے گی۔

پانی وہ مادّہ ہے جو زندگی کی اہم ترین ضرورت بھی ہے اس لیے پانی کی عدم دستیابی پر انسانی جسم میں موجود تمام جراثیم بھی بڑی تیزی سے ختم ہوجائیں گے یعنی خلا میں م±ردہ انسانی جسم گلنے سڑنے سے بھی محفوظ رہے گا۔

اگر مردہ جسم زمین کے گرد نچلے مدار میں گردش کر رہا ہو گا تو اس کا مدار بتدریج مختصر ہوتا چلا جائے گا اور چند گھنٹوں سے لے کر چند دنوں کے اندر اندر ہی وہ زبردست رفتار کے ساتھ زمینی کرہ ہوائی میں داخل ہوجائے گا۔ یہاں ہوا کے ذرّات سے شدید رگڑ اور زبردست درجہ حرارت کی وجہ سے وہ صرف چند لمحوں میں جل کر راکھ ہوجائے گا اور بالائی کرہ ہوائی میں بکھر جائے گا۔ زمین سے دیکھنے پر یہ منظر شہابِ ثاقب کی طرح دکھائی دے گا۔

دور دراز خلا کا ماحول انتہائی سرد بھی ہوتا ہے جس کا اوسط درجہ حرارت صرف 2.73 ڈگری کیلون یعنی منفی 270 ڈگری سینٹی گریڈ سے بھی کم ہوتا ہے۔ خلا کے اس تاریک اور شدید سرد ماحول میں کوئی بھی لاش برف سے بھی زیادہ ٹھنڈی رہے گی اور اگر اسے کسی ناگہانی آفت کا سامنا کرنا نہیں پڑا تو وہ کروڑوں اربوں سال تک تقریباً اسی حالت میں رہے گی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس