پانامہ ہو یا بے نامہ ،پاکستان ترقی کرتا رہے گا،دھرنے ہوں یا لاک ڈاؤن ملکی تعمیر وترقی کے منصوبے مکمل کرتے جائیں گے:شہبازشریف

پانامہ ہو یا بے نامہ ،پاکستان ترقی کرتا رہے گا،دھرنے ہوں یا لاک ڈاؤن ملکی ...
پانامہ ہو یا بے نامہ ،پاکستان ترقی کرتا رہے گا،دھرنے ہوں یا لاک ڈاؤن ملکی تعمیر وترقی کے منصوبے مکمل کرتے جائیں گے:شہبازشریف

  

لاہور ( این این آئی)وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے کہاہے کہ پا نامہ ہو یا بے نامہ ،پاکستان ترقی کرتا رہے گا جبکہ دھرنے ہوں یا لاک ڈاون ہم ملکی تعمیر و ترقی کے منصوبے مکمل کرتے جائیں گے ۔

ڈونلڈ ٹرمپ وہی بات کر رہے ہیں جو داعش کر رہی ہے :میئر لند ن صادق خان

تفصیلات کے مطابق شہباز شیریف کا منعقدہ خصوصی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ وزیراعظم محمد نوازشریف کی قیادت میں توانائی سمیت سی پیک کے دیگر منصوبوں پر بھی انتہائی برق رفتاری سے کام ہورہاہے اور پاکستان میں خوشحالی کا انقلاب آ رہاہے جبکہ نوازشریف نے پاک چین دوستی کو مضبوط سے مضبوط تر بنانے میں بہت اہم کردار ادا کیاہے تاہم بعض عناصر جو باہر سے تو پاک چین دوستی کا دم بھرتے ہیں لیکن اندر سے اس کی مخالفت کر رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے مخالفین اور ناقدین کہتے تھے کہ یہ منصوبے عملی شکل اختیار نہیں کریں گے لیکن اللہ تعالی کے فضل وکرم سے سی پیک کا میگا منصوبہ آج 1320میگا واٹ بجلی نیشنل گرڈ کو فراہم کررہاہے جبکہ دھرنا دینے والے حقیقت میں پاکستان کے مستقبل کو اندھیروں میں دھکیلنا چاہتے تھے او رچینی صدر کا دورہ ملتوی ہوا ۔چین نے ایسے وقت میں پاکستان کا ہاتھ تھاما جب ملک میں بجلی کے ا ندھیرے چھائے ہوئے تھے، معیشت خراب تھی او رکاروبار نہیں ہورہاتھا۔

شہباز شریف نے کہا کہ چینی قیادت نے اپنے عوام کے خون پسینے کی کمائی سے 60ارب ڈالر کے منصوبے پاکستان کو دئیے اورپاکستانی قوم اس احسان عظیم کو کبھی فراموش نہیں کرسکے گی کیونکہ اگر ہم اپنا زر مبادلہ ان منصوبوں کے لئے استعمال کرتے تو وہ ختم ہوجانا تھا۔وزیراعلی نے کہاکہ پانامہ ہو یا بے نامہ ،پاکستان ترقی کرتا رہے گا۔دھرنے ہوں یا لاک ڈاؤن پاکستان کی تعمیر وترقی کے منصوبے مکمل کرتے جائیں گے۔ پاکستان اپنی منزل کی جانب رواں دواں ہوچکا ہے۔20کروڑ عوام اس منزل کو کھوٹہ نہیں ہونے دیں گے کیونکہ عوام نے ماضی میں بھی دھرنوں اور لاک ڈاؤن کو ناکام کیا او راب بھی ناکام کریں گے او رپاکستان کی ترقی وخوشحالی کے سفر کو آگے بڑھائیں گے۔

مزید : قومی