مودی اسرائیل میں وہ کام کریں گے جو آج تک کسی بھارتی نے نہیں کیا، تشویشناک خبر آگئی

مودی اسرائیل میں وہ کام کریں گے جو آج تک کسی بھارتی نے نہیں کیا، تشویشناک خبر ...
مودی اسرائیل میں وہ کام کریں گے جو آج تک کسی بھارتی نے نہیں کیا، تشویشناک خبر آگئی

  

نئی دلی (نیوز ڈیسک) بھارتی وزیراعظم نریندر مودی جب بھی غیر ملکی دورے پر جاتے ہیں تو وہاں بھارتی نژاد لوگوں کو اکٹھا کرکے جلسہ شروع کر دیتے ہیں۔ وہ یہ کام اس سے پہلے امریکہ، برطانیہ، آسٹریلیا، متحدہ عرب امارات اور نیدرلینڈز جیسے ممالک میں تو کرچکے ہیں لیکن اب پہلی بار اسرائیل میں بھی وہ یہی کام کرنے والے ہیں۔

یروشلم پوسٹ کی رپورٹ کے مطابق وزیراعظم نریندر مودی عنقریب اسرائیلی دورے پر پہنچیں گے، جو کہ کسی بھی بھارتی وزیراعظم کا اسرائیل کا پہلا دورہ ہوگا۔ اگرچہ اسرائیل میں بھارتی نژاد شہریوں کی اتنی بڑی تعداد تو آباد نہیں جو امریکہ اور برطانیہ جیسے ممالک میں ہے لیکن پھر بھی وہاں 80 سے 85 ہزار بھارتی نژاد شہری ضرور موجود ہیں۔ رپورٹ کے مطابق نریندر مودی اسرائیلی دارالحکومت تل ابیب کے علاقے فیئر گراﺅنڈز میں بدھ کی شام چار سے پانچ ہزار بھارتی نژاد شہریوں کو خطاب کریں گے۔

دنیا کا وہ شہر جہا ں تارکین وطن کی آبادی اس کی اپنی آبادی سے زیادہ ہو گئی یہ شہر سعودی عرب یا کسی اور عرب ملک کا نہیں بلکہ ۔۔۔ جواب ایسا ہے کہ کوئی سوچ بھی نہ سکتا تھا

اسرائیل میں بھارتی سفیر پون کپور نے نریندر مودی کی اس حکمت عملی کے بارے میں بات کرتے ہوئے یروشلم پوسٹ کو بتایا ”ہمارے وزیراعظم سمندر پار بھارتی شہریوں کے ساتھ رابطہ رکھنا پسند کرتے ہیں۔ وہ بیرون ملک سفر کے دوران ہر کسی سے رابطہ کرنا چاہتے ہیں اور بیرون ملک آباد بھارتی نژاد شہریوں کا یقینا بھارت سے ایک تعلق ہے۔ وہ ان کی کاوشوں کیلئے ان کا شکریہ ادا کرنا چاہتے ہیں کیونکہ سمندر پار بھارتی شہری بھارت کے بہترین سفیر ہیں۔ وزیراعظم ان لوگوں کو ہمیشہ بھارت کے دوستوں کے طور پر دیکھتے ہیں۔“

اس سے پہلے ابھی گزشتہ ہفتے ہی نریندر مودی نیدرلینڈز کے دورے پر گئے تھے جہاں انہوں نے ایک بڑے جلسے سے خطاب کیا۔ اس جلسے میں موجود ہزاروں بھارتی نژاد شہری ’مودی، مودی‘ کے نعرے لگاتے رہے۔ اس موقع پر مودی نے بیرون ملک مقیم ہر بھارتی شہری کو بھارت کا سفیر قرار دیا۔

مزید : بین الاقوامی