سابق ایم ڈی اے چیئرمین سے پرانی فائلوں پر دستخط کرانے کیلئے دباؤ

سابق ایم ڈی اے چیئرمین سے پرانی فائلوں پر دستخط کرانے کیلئے دباؤ

ملتان ( سپیشل رپورٹر ) اسمبلیوں کی مدت ختم ہونے کے بعد ایم ڈی اے میں چیئرمین سے پرانی تاریخوں میں اہم کیسز نمٹانے اور میٹنگ منٹس پر دستخط کرنے کے لیے دباؤ ڈالے جانے کا انکشاف سامنے آگیا ہے ۔ محمد علی کھوکھر نے کسی بھی غیر قانونی عمل کا حصہ بننے سے انکار کردیا ۔ 31مئی(بقیہ نمبر13صفحہ12پر )

کو اسمبلیوں کی مدت اور پنجاب سے مسلم لیگ ن کی حکومت ختم ہونے کے بعد ملتان ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے چیئرمین محمد علی کھوکھر نے قواعد کے مطابق اپنے عہدے سے تحریری طو رپر استعفیٰ دیدیا ہے ۔ تاہم ایم ڈی اے میں موجود مخصوص مافیا انہیں پرانی تاریخوں میں بعض اہم کیسز کی فائلوں اور 24مئی کو ہونے والی اتھارٹی میٹنگ کے منٹس پر دستخط کرنے پر مجبور کرنے لگے ہیں اور اس سلسلے میں ان پر مختلف طریقوں سے دباؤ بھی ڈالا جانے لگا ہے ۔ تاہم الیکشنز اور موجودہ سیاسی صورتحال کے پیش نظر سابق چیئرمین ایم ڈی اے ملک محمد علی کھوکھر نے ایسے کسی بھی غیر قانونی عمل کا حصہ بننے سے انکار کردیا ہے ۔ محمد علی کھوکھر کا کہنا تھا کہ کوئی کچھ بھی کہے وہ کسی بھی فائل یا میٹنگ منٹس پر پرانی تاریخوں میں دستخط نہیں کرینگے ۔ وہ اب چیئرمین ایم ڈی اے نہیں رہے اور نہ ہی چیئرمین کے طور پر فرائض سرانجام دے سکتے ہیں ۔ تاہم ذرائع کا کہنا ہے کہ ایم ڈی اے کا مخصوص مافیا مختلف حیلوں بہانوں سے ان پر دباؤ ڈالتے ہوئے انہیں پرانی تاریخوں میں بعض اہم فیصلوں ، میٹنگ منٹس اور فائلوں پر دستخط کرنے پر مجبور کررہا ہے ۔

دباؤ

مزید : ملتان صفحہ آخر