تھر فاؤنڈیشن نے تھر میں ایک اور مفت اسپتال قائم کردیا

تھر فاؤنڈیشن نے تھر میں ایک اور مفت اسپتال قائم کردیا

کراچی (پ ر) تھر کول بلاک میں ماروی کلینک کے ذریعے ھزاروں مریض کو فائدہ پہنچانے کے بعد تھر فاؤنڈیشن نے گوڑانو کے علاقے میں ایک مزید اسپتال قائم کر دی ہے، جس میں زچہ بچہ سے متعلقہ علاج کی سہولیات بلکل مفت فراہم کی جائیں گی، گوڑانو میں زچہ بچہ صحت مرکز کا افتتاح گذشتہ روز ایک تقریب کے دوران کیا گیا، جس میں بتایا گیا کہ اسپتال سے علاقے کے 20 گزار سے زائد کی آبادی استفادہ ہوگا اور علاقے کے لوگوں کو ماں اور بچے کی طبی سہولیات حاصل کرنے کے لیے ھزاروں روپے خرچ کر کے اسلام کوٹ یا مٹھی جانا نہیں پڑے گا جبکہ نوزائیدہ بچوں اور ماؤں کی اموات کو کم کرنے میں مدد ملے گی۔ تقریب میں یے بھی بتایا گیا کہ تھر کول بلاک ٹو کی ماروی کلینک اور گوڑانو میں قائم زچہ بچہ صحت مرکز، تھر فاؤنڈیشن کی جانب سے اسلام کوٹ میں زیر تعمیر تھر فاؤنڈیشن اسپتال کے لیے فیڈ کلینک کے طور پر کام سر انجام دیں گی. زچہ بچہ صحت مرکز کا قیام معیاری اسکولوں اور پینے کے صاف پانی کی سکیموں کے بعد ایک اور انقلابی اقدام ہے۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے گوڑانو کے رہائشی سکندر سنگراسی نے کہا کہ ہمیں زچہ بچہ کی صحت کے حوالے سے بہت زیادہ تکلیف تھی اور ہمیں 40 کلومیٹر دور اسلام کوٹ شہر جانا پڑتا تھا، لیکن تھر فاؤنڈیشن اور سندھ اینگرو کول مائننگ کمپنی کے شکر گزار ہیں جنہوں نے ہمارے علاقے میں اسپتال قائم کی ہے، جہاں پر ہماری خواتین اور بچوں کا علاج اور ادویات مفت فراہم کی جائیں گی، تقریب سے خطاب کرتے ہوئے اسپتال میں مقرر ڈاکٹر شاھدہ نے کہا کہ میری بھرپور کوشش ہوگی کے یہاں کی خواتین اور بچوں کا بہتر علاج کر سکوں اور ان کو صحت کی معیاری سہولیات فراہم کر سکوں، انہوں نے کہا کہ یہاں کی ماؤں اور بچوں کے صحت مرکز پر آئیں اپنا علاج کرائیں ان کو علاج کے ساتھ مفت ادویات بھی دی جائے گی، افتتاحی تقریب کو خطاب کرتے ہوئے اسلام کوٹ ٹاؤن چیئرمین کملیش کمار لوھانو نے کہا کہ تھر فاؤنڈیشن اور سندھ اینگرو کول مائننگ کمپنی کی جانب سے گوڑانو اور آسپاس کے علاقوں میں کلینک قائم کرنا ایک بہترین عمل ہے اور تھر فاؤنڈیشن کی جانب سے صحت اور تعلیم کے میدان میں کیے گئے کام قابل تعریف ہیں، اس موقع پر اینگرو پاورجین تھر لمیٹڈ کے پراجیکٹ ڈائریکٹر سائٹ عاصم سعید نے کہا کہ اینگرو ٹیم کی جانب سے نہ صرف مائننگ اور بجلی گھر پر کام ہو رہا ہے پر علاقے کی ترقی کے لیے بھی موثر اقدامات بھی لیے جا رہے ہیں، سندھ اینگرو کول مائننگ کمپنی کے جنرل مینجر پراجیکٹس محمد ادریس نے کہا کہ ماں اور بچے کی صحت بنیادی اہمیت کی حامل ہوتی ہے اسی سلسلے کو مدنظر رکھتے ہوئے تھر فاؤنڈیشن نے ایک اہم قدم اٹھایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت اور ضلعی انتظامیہ اسی کام میں بھرپور تعاون کیا ہے، انہوں نے بتایا کہ ماروی کلینک اور گوڑانو میں زچہ بچہ صحت مرکز اسلام کوٹ میں زیر تعمیر تھر فاؤنڈیشن اسپتال میں فیڈ کلینک طور بھی کام کریں گی اور علاقے میں صحت کی سہولیات کے حوالے سے ایک انقلابی قدم ہوگا، تھر فاؤنڈیشن کے فیاض سومرو نے کہا کہ سندھ اینگرو کول مائننگ کمپنی اور تھر فاؤنڈیشن مقامی آبادی کو بھی فائدہ پہنچانے کے لیے تمام وسائل بروئے کار لائے جارہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اچھی فیمیل ڈاکٹر کی نگرانی میں یہاں کی ماؤں اور بچوں کی صحت کا مکمل خیال رکھا جائے گا، اسی موقع پر تھر فاؤنڈیشن کے شعبہ تعلیم کی مینجر سبین شاہ نے کہا کہ تھر فاؤنڈیشن کی بھرپور کوشش ہے کہ یہاں کے لوگوں بنیادی سہولیات جیسے کہ صحت، تعلیم اور پینے کا صاف پانی کی تمام سہولیات فراہم کی جائیں، اسی مقصد کے مدنظر رکھتے ہوئے گوڑانو ماں اور بچے کے صحت مرکز قائم کیا گیا ہے۔ ڈاکٹر اشوک بختانی نے کہا کہ تھر فاؤنڈیشن مقامی آبادی کو صحت، تعلیم پینے کے صاف پانی سمیت روزگار جے مواقع فراہم کر رہی ہے، تقریب میں عمیر اسلم بٹ، جھان آرا، میجر نوید، اویس مھر، ڈاکٹر مٹھارام، نصیر جونیجو، فیاض شیخ اور دیگر نے اپنے خیالات کا اظہار کیا، تقریب میں گوڑانو سمیت آسپاس کے دیہاتیوں نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر