حکومت معاشی محاذ پر فلاپ‘ گرفتاریاں سیاسی انتقام‘ لیگی ارکان اسمبلی

حکومت معاشی محاذ پر فلاپ‘ گرفتاریاں سیاسی انتقام‘ لیگی ارکان اسمبلی

بورے والا، ہارون آباد(تحصیل رپورٹر، نمائندہ پاکستان)مسلم لیگ ن کے ممبران قومی وصوبائی اسمبلی چوہدری فقیر احمد آرائیں،سید ساجد مہدی سلیم شاہ،سردار خالد محمود ڈوگر،اور چوہدری محمد یوسف کسیلیہ نے اپنے ایک مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ مسلم لیگ ن پنجاب کے صدر ممبر قومی اسمبلی رانا ثناء کی گرفتاری سیاسی انتقام کی بدترین مثال ہے ہم اس کی بھرپور مذمت کرتے ہیں حکومت ہر محاذ پر ناکام ہو گئی (بقیہ نمبر38صفحہ12پر)

ہے،بجٹ میں لگائے گئے ظالمانہ بھاری ٹیکسوں کی بھرمار سے مہنگائی کا ایک طوفان برپا ہوگیا ہے، حکومت اس سے توجہ ہٹانے کے لیے اپنے سیاسی مخالفین کو انتقامی کاروائیوں کا نشانہ بناتے ہوئے گرفتار کر رہی ہے، رانا ثناء اللہ کی گرفتاری متوقع تھی کیونکہ جس طرح مسلم لیگ کے موقف کو جرآت سے وہ سامنے لا رہے تھے، انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ میاں نواز شریف کی قیادت میں متحد ہے حکومتی وزیر مشیر دن رات اختلافات کا جھوٹا اور بے بنیاد پروپیگنڈہ کرکے لوگوں کو گمراہ کرنے میں مصروف ہیں۔ دریں اثنائمسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنماء میاں عالم داد لالیکا ایم این اے نے ضلعی رہنماء ملک قمر عوان کے ہمراہ عوامی پریس کلب والیکٹرانک میڈی ایسوسی ایشن کے صحافیوں سے خصوصی گفتگو میں کہا ہے کہ مسلم لیگ (ن) پنجاب کے صوبائی صدر رانا ثناء اللہ کی گرفتاری سیاسی انتقام کی بدترین مثال ہے اپوزیشن سے خوف زدہ حکمران مہنگائی کے سونامی اور ٹیکسوں کی بھرمار سے توجہ ہٹانے کے لیے اس قسم کی گرفتاری کے منفی ہتھکنڈے استعمال کرتے ہیں حکومت کمزور اور مایوسی کا شکار ہوچکی ہے اور ہارس ٹریڈنگ کی کوششیں حکمرانوں کی بوکھلاہٹ کا اظہار ہیں مسلم لیگ (ن) نے انتقام کی سیاست کی بجائے جمہوری اقدار اور اصولوں کے مطابق حکومت کی ہے اور اب اپوزیشن بھی انہی خطوط پر کر رہے ہیں۔

سیاسی انتقام

مزید : ملتان صفحہ آخر