سیاسی وفاداریاں تبدیل کرنیوالے ہی جمہوریت کے ناسور‘ لیاقت بلوچ

سیاسی وفاداریاں تبدیل کرنیوالے ہی جمہوریت کے ناسور‘ لیاقت بلوچ

ملتان(سپیشل رپورٹر)نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان اور سابق پارلیمانی لیڈر لیاقت بلوچ نے کہاہے کہ ملک میں بدترین سیاسی، معاشی، سماجی بحران گہرے ہورہے ہیں۔ حکومت اپوزیشن کے سب افراد کو گرفتار بھی کر لے تو پھر بھی گڈ گورننس کا قیام اور اقتصادی بحران کا خاتمہ نااہلوں سے ممکن نہیں۔ وفاقی اور صوبائی حکومتیں مہنگائی، بے روزگاری کے خاتمہ اور پیداواری لاگت میں کمی کا علاج کرنے(بقیہ نمبر17صفحہ12پر)

 کی بجائے جان بوجھ کر انتظامی اور سیاسی بحران انجینئرڈ کر رہی ہیں۔ تاجر برادری کے ملک گیر احتجاج کی ہم مکمل حمایت کرتے ہیں۔ آئی ایم ایف کا مسلط کردہ بجٹ منظور نہیں۔ انہوں نے کہاکہ بلوچستان کے عوام کا مسئلہ سرکار اور سردار کے گٹھ جوڑ کی وجہ سے ہے۔ بلوچستان کے عوام، نوجوان اور طلبہ محب وطن ہیں۔ باعزت اور باوقار زندگی چاہتے ہیں لیکن مرکز اور صوبہ کی حکومتوں کی غلط پالیسیوں سے تعلیم، صحت، روزگار اور عدم تحفظ کا بحران بڑھتا ہے اس خلا میں ملک دشمن قوتیں اپنا کھیل کھیلتی ہیں۔ انہوں نے کہاکہ جماعت اسلامی گوادر میں بجلی اور پانی کے بحران پر شدید احتجاج کرتی ہے۔ عمران خان دعوے اور اعلانات کی بجائے گوادر کے عوام کے دکھ درد دور کریں۔انہوں نے کہاکہ سیاسی وفاداریا ں تبدیل کرنے والے ہی سیاست اور جمہوریت کے ناسور ہیں۔انہیں قبول کرنے والے ماضی سے کوئی سبق نہیں سیکھ رہے ایسے حربے کبھی کسی کو راس نہیں آئے۔

لیاقت بلوچ

مزید : ملتان صفحہ آخر